حکومت دبئی میں ناچ گانے کے بجائے زلزلہ متاثرین کی مددکرے،حفیظ الرحمان

12345-505.jpg

گلگت(پ ر) سابق وزیراعلی و صوبائی صدر مسلم لیگ (ن)گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن نے میڈیا کو جاری ایک بیان میں کہاہیکہ گلگت سکردو روڈ کی بندش,روندو میں زلزلہ متاثرین کا احتجاج بلتستان ریجن کی موجودہ صورتحال پر سلیکٹیڈ صوبائی حکومت نے بیحسی کی انتہا کردی,زلزلے سے متاثر ہونے کے بعد کئی روز گزر چکے,متاثرین صورتحال کے رحم و کرم پر ھے۔روڈ کی بندش سے جہاں ہزاروں مسافر ازیت ناک صورتحال سے گزرہے ہیں وہاں بلتستان ریجن میں قحط سی صورتحال پیدا ہونے کا خدشہ سامنے آچکا ھے۔اس سے پہلے کی بہت بڑا نقصان ھو متاثرین کو محفوظ مقام پر منتقل کیا جائے,متاثرین کا احتجاج سلیکٹیڈ صوبائی حکومت کے منہ پر طمانچہ ھے۔ڈیسزاسٹر منیجمنٹ میں سابق حکومت کے دیئے گئے 80 کروڑ کے ڈیسزاسٹر اندومنٹ فنڈز اور گوداموں میں ہر طرح کا امدادی سامان موجودہ ھے,صوبائی حکومت خیراتی اداروں کے پیچھے بھاگنے کی بجائے فوری طور پر حکومتی وسائل سے متاثرین کی مدد کریں,دبئی میں ناچ گانے پر صوبائی حکومت نے کروڑوں روپے اڑائے,مشکل صورتحال سے دوچار عوام کیلئے آنکھیں بند کرنا عوام دشمنی سے کم نہیں,بلاسٹنگ کے زریعے کشادگی سے ملحقہ ایریاز کمزور ہوچکے ہیں جس کی وجہ سے موجودہ صورتحال کا سامنا ھے,حکومت فوری طور پر اچھی شہرت کے حامل جیالو جیکل کمپنیز کے سروے کے زریعے موجودہ جیسی صورتحال سے مستقبل میں نکلنے کیلئے رپورٹ تیار کروائے اور اس رپورٹ پر فوری عملدرآمد کرے۔انہوں نے کہاکہ گلگت سکردو مسلم لیگ (ن) کا میگا منصوبہ ھے اس اہم قومی منصوبے کی منظوری کے بعد موجودہ صورتحال پیشگی اندازہ کرکے اس وقت کی ہماری صوبائی حکومت نے اس روڈ پر ٹنلز بنانے کیلئے فیزبلیٹی کی سفارش کی موجودہ وفاقی حکومت نے اس وقت ہماری گزارش کو نظر انداز کیا,موجودہ صورتحال نے ہمارے اس وقت کے موقف کو تقویت دی حیران کن بات ھے کہ متعدد روز گزرنے کے باوجود سلیکٹیڈ وزیراعلی سمیت کسی حکومتی وزیر کو توفیق نہیں ہوئی کہ وہ موجودہ صورتحال پے اداروں کی اجلاس بلا لیتے عوام کے حق میں فیصلے کرتے اور میڈیا میں آکر موجودہ صورتحال روڈ بندش کی وجہ اور روڈ کھولنے کیلئے کام کی رفتار,روڈ کھلنے کی ممکنہ امید اور حکومت کی حکمت عملی میڈیا کے زریعے عوام کے سامنے لاتے بدقسمتی سے ایسا نہیں ہوا جبکہ گلگت بلتستان کا اہم ریجن زلزلوں کے بعد انتہائی مشکلات دو چار ہیں۔سلیکٹڈ وزیراعلی اور وزرا موجودہ صورتحال سے بھاگ کر عمران نیازی کی ڈوپتی کشتی کو بچانے کا ڈرامہ کرکے اسلام آباد جانے کیلئے گلگت میں روزانہ اجلاسوں میں مصروف ہیں جبکہ زلزلے سے متاثر عام لوگوں کیلئے اس سلیکٹڈ حکومت کے پاس نہ وسائل ھے نہ وقت ھے,سابق وزیراعلی حفیظ الرحمن نے مزید کہاکہ سلیکٹڈ صوبائی حکومت اور ادارے ہوش میں آئے اور زلزلہ متاثرین کی فوری مدد شروع کرے اور بھرپور وسائل فراہم کرے,متاثرین کو محفوظ مقامات پر منتقل کریں اور متاثرین کو اعتماد میں لیکر اقدامات کئے جائے۔

شیئر کریں

Top