عطاء اللہ شاہ کی مدت ملازمت میں توسیع کیخلاف پٹیشن سماعت کیلئے منظور

12345-88.jpg

????????????????????????????????????

گلگت(بادشمال نیوز)چیف جسٹس گلگت بلتستان چیف کورٹ جسٹس علی بیگ کی سربراہی میں جسٹس جوہر علی خان پر مشتمل دو رکنی بینچ نے وائس چانسلر قراقرم انٹرنیشنل یونیورسٹی ڈاکڑ عطا اللہ شاہ کی تقرری اور مدت ملازمت میں مزید توسیع کے خلاف دائر رٹ پیٹشن پر سماعت کرتے ہوئے ابتدائی سماعت کے لئے مقرر کر کے فریقین کو نوٹسز جاری کرنے کا حکم دیدیا جبکہ چیف کورٹ کی ڈویژن اور سنگل بینچوں نے سماعت کرتے ہوئیمزید دیوانی اور فوجداری پر مشمل 31مقدمات کو نمٹایا اور 9 مقدمات کو قابل سماعت قرار دیکر فریقین کو نوٹسز جاری کرنے کے احکامات دئیے بدھ کے روز چیف جسٹس علی بیگ کی سربراہی میں جسٹس جوہر علی خان پر مشتمل دو رکنی بینچ نے سماعت کرتے ہوئے 17 مقدمات کو نمٹایا اور 9 مقدمات کو قابل سماعت قرار دیکر فریقین کو نوٹسز جاری کرنے کے احکامات دیدئیے جبکہ جسٹس ملک عنایت الرحمن نے سنگل بینچ میں 9اور جسٹس راجہ شکیل احمد نے 5مقدمات پر فیصلہ دیکر نمٹائے تفصلات کمطابق وائس چانسلر قراقرم انڑنشنل یونیورسٹی ڈاکڑ عطااللہ شاہ کی تقرری اور ملازمت میں مزید توسیع کو چیلنچ کرتے ہوئے ایڈووکیٹ غلام محمد نے موقف اپناتے ہوئے کہا کہ وائس چانسلر کبھی کسی تعلیمی ادارے میں اسسٹنٹ پروفیسر تک نہیں رہے وائس چانسلر تقرری کی تقرری کے لئے اہلیت نہیں رکھتے ہیں انکی مدت ملازمت میں توسیع گلگت بلتستان کا مستقبل داو پر لگانے کے مترادف ہے۔ وائس چانسلر کی نہ صرف پہلے مرحلے کی تقرری غیر قانونی ہے بلکہ اس کے دوسری مدت کیلئے تقرری بھی خلاف قانون ہے اور اس عظیم درسگاہ میں سفارشی اور سیاسی بنیادوں پر تقرری کو روکا جائے معزز عدالت نے مقدمے کو ابتدائی سماعت کے لئے مقرر کرتے ہوئے فریقین کو نوٹسز جاری کرنے کے احکامات دیدیا

شیئر کریں

Top