نیٹکو میں بھرتیوں پر پابندی، منافع بخش ٹرانسپورٹ کمپنی بنانے کیلئے پرعزم ہیں، وزیراعلیٰ

g6-7.jpg

گلگت (بادشمال نیوز)وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان خالد خورشید نے نیٹکو میں 20 کروڑ کی لاگت سے 8نئے جدید سہولیات سے آراستہ بسوں کو فلیٹ میں شامل کرنے کے حوالے سے منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نیٹکو ہمارا قومی ادارہ ہے۔ نیٹکو نے گلگت بلتستان میں سفری سہولیات کی فراہمی اور ٹرانسپورٹیشن کے شعبے میں نمایاں کردار ادا کیا ہے۔ ہماری حکومت سے قبل نیٹکو خسارے کا شکار تھا۔ ملازمین کی تنخواہوں کی ادائیگی کا مسئلہ بناہوا تھا۔ سٹیل مل اور پی آئی اے کی طرح نیٹکو کو بھی مالی مشکلات کا شکار کیا گیا تھا۔ ہم نے نیٹکو کو درپیش مسائل حل کئے۔ نئے بسوں کی خریداری کیلئے 20 کروڑ روپے فراہم کئے۔ مختلف بینکوں سے لئے گئے قرضوں کی ادائیگی کیلئے 35 کروڑ روپے فراہم کئے۔ اداروے کو مالی طور پر مستحکم کرنے کیلئے 17 کروڑ روپے کی بریج فنانسنگ کی۔ 150 ملازمین کو دیگر اداروں میں ڈیپوٹیشن پر بھجوایا گیا۔ وزیر اعلیٰ خالد خورشید نے کہاکہ سابقہ حکومتوں نے نیٹکو کو اپنے کارکنوں کو نوازنے اور نوکریوں کا ذریعہ بنایا ہوا تھا۔ ہم نے نیٹکو میں ملازمتوں پر مکمل پابندی لگائی۔ اب نیٹکو ملازمین کی ذمہ داری ہے کہ پرائیویٹ ٹرانسپورٹ کمپنیز سے بہتر کارکردگی دیکھائیں اور ادارے کو منافع بخش بنائیں۔ ایمانداری اور لگن سے کام کریں تو نیٹکو پاکستان کے بہترین ٹرانسپورٹ کمپنیوںمیں شامل ہوسکتا ہے۔ حکومت نیٹکو کو منافع بخش ٹرانسپورٹ کمپنی بنانے کیلئے ہر ممکن تعاون کرے گی۔ ادارے کو مالی طورپر مستحکم کرنے کیلئے تقریباً ایک ارب کی رقم فراہم کی گئی ہے۔
گلگت (بادشمال نیوز)وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان خالد خورشید، چیف سیکریٹری گلگت بلتستان، چیئرمین فیڈرل بورڈ اور سابق گورنر سٹیٹ بینک عشرت حسین نے فیڈرل بورڈ میں نمایاں پوزیشن حاصل کرنے والے طالب علموں میں انعامات تقسیم کئے۔ اس موقع پر وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان خالد خورشید نے گفتگوکرتے ہوئے کہاکہ حکومت بہتر تعلیم کیلئے ہر ممکن اقدامات کررہی ہے۔ تعلیم کے شعبے میں نئے اور جدید اصلاحات متعارف کرارہے ہیں جن کے مثبت ثمرات بہت جلد سامنے آئیں گے۔ روایتی نظام تعلیم کو تبدیل کررہے ہیں۔ نمایاں پوزیشن حاصل کرنے والے طالب علموں کی بھرپور حوصلہ افزائی کی جائے گی اور اعلیٰ تعلیم کیلئے مواقعے فراہم کئے جائیں گے۔

شیئر کریں

Top