پاکستان ریلوے اور فرنٹیئر ورکس آرگنائزیشن کے درمیان مفاہمت کی یاداشت پر دستخط

images-78.jpeg

وفاقی وزیر اعظم سواتی نے ریلوے کو آئندہ6 ماہ میں منافع بخش ادارہ بنانے کا دعوی کر دیا
تین ماہ گزر گئے ہیں اور6 ماہ رہتے ہیں،ریلوے کو اپنے پاؤں پر کھڑا کریں گے، ریلوے خسارہ تشویشناک ، کرپشن کے باعث تباہ حال اداروں کو ٹھیک کریں گے، فریٹ میں 30ارب کا ٹارگٹ کوجلد پورا کریں گے،بہاولنگر میں سامان ایف ڈبلیو او نے پہنچادیاہے، لاہور میں 4سو ایکڑ زمین ایف ڈبلیو او کو دینے جارہے ہیں، وفاقی وزیر ریلوے اعظم سواتی کی ایف ڈبلیو او کے ساتھ مفاہمتی یاداشت پر دستخط کی تقریب کے بعد میڈیا سے گفتگو
اسلام آباد(آئی این پی)وفاقی وزیر ریلوے اعظم سواتی نے آئندہ 6 ماہ میں خسارہ ختم کر کے ریلوے کو منافع بخش ادارہ بنانے کا دعوی کرتے ہوئے کہا ہے کہ9ماہ کے اندر ریلوے منافع بخش ادارہ بنا دیں گے ،تین ماہ گزر گئے ہیں اور6 ماہ رہتے ہیں،ریلوے کو اپنے پاؤں پر کھڑا کریں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایف ڈبلیو او کے ساتھ مفاہمت کی یاداشت پر دستخط کی تقریب کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ایف ڈبلیو او کے ڈی جی میجر جنرل کمال اظفربھی موجود تھے ۔وفاقی وزیر ریلوے نے کہا کہ اللہ کا شکر ادا کرتا ہوں اور ٹیم کا مشکور ہوں اور ایف ڈبلیو کا شکریہ ادا کرتا ہوں ،میڈیا کواس لیے بتارہے ہیں کہ عوام کو پتہ چلے ریلوے خسارہ ملک کے لیے تشویشناک صورت حال ہے کرپشن کے باعث تباہ حال اداروں کو ٹھیک کریں گے ،9ماہ کے اندر ریلوے منافع میں ہو جائے گی تین ماہ گزر گئے ہیں اور 6رہتے ہیں ۔انہو ں نے کہا کہ فریٹ میں 30ارب کا ٹارگٹ دیا ہے اس حدف کوجلد ازجلد پورا کریں گے،اس کے بعد مسافر ٹرینوں کی طرف آوں گا ۔اب ہم نے منصوبوں کومزید تاخیر نہیں کروانی ٹائم پیسہ ہے ۔انفرسٹرکچرکو بہتر کریں گے تو ریل محفوظ ہوگی اور مسافروں میں اعتماد پیدا ہو گا۔حکومت ریلوے کو ترجیح دے رہی ہے ۔بہاولنگر میں سامان ایف ڈبلیو او نے پہنچادیاہے، لاہور میں 4سو ایکڑ زمین ایف ڈبلیو او کو دینے جارہے ہیں

شیئر کریں

Top