ملی یکجہتی کونسل کی 35 جماعتوں کا سربراہی اجلاس 13 جنوری کو منصورہ لاہور میں منعقد ہو گا،لیاقت بلوچ

logo.png

لاہور: جماعت اسلامی پاکستان کے نائب امیر اور ملی یکجہتی کونسل کے سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کہاہے کہ ملی یکجہتی کونسل کی 35 جماعتوں کا سربراہی اجلاس 13 جنوری کو منصورہ لاہور میں منعقد ہو گا ۔

پاکستان اور عالم اسلام کے لیے نئے خطرات کے سدباب کے لیے پاکستان کی دینی جماعتیں اپنا لائحہ عمل طے کریں گی ۔ اپنے جاری بیا ن میں انہوں نے کہا کہ امریکہ ، اسرائیل اور بھارت کی شیطانی تثلیث مسلمانوں اور عالم اسلام کے لیے خطرناک شکل اختیار کر گئی ہے ۔ کشمیر کو ہندوستان ہڑپ کر رہاہے،

فلسطین پر اسرائیل ناجائز قابض ہے ۔ فلسطینیوں کو آزاد ی سے محروم کرنے اور صدی کی ڈیل مسلط کرنے کے لیے امریکہ عالم اسلام پر نئی جنگ مسلط کر رہاہے ۔ دینی جماعتوں اور قیادت کو اس چیلنج کا مقابلہ کرنا ہے اور اپنا فرض ادا کرناہے ۔ لیاقت بلوچ نے کہاکہ اتحاد امت ہی عالم اسلام کو زوال ، ذلت اور رسوائی سے بچائو کا پائیدار ذریعہ ہے۔ اب بھی غلامانہ ذہنیت سے جان نہ چھڑائی تو فکر و نظر کی یکسوئی کی بجائے انتشار اور عدم استقلال بڑی تباہی کا باعث ہوگا ۔

انہوں نے کہاکہ قاضی حسین ا حمد  جرأت مند اور عشق رسول ۖ سے سرشار تھے، وہ قائد اعظم ، علامہ اقبال  اور مولانا مودودی  کی فکر کے سفیر اور زبردست نقیب تھے ۔ قائداعظم  اور علامہ اقبال  کا برصغیر کے مسلمانوں کے لیے آزادی کا وژن اور دو قومی نظریہ ہی مسلمانوں کے مستقبل کا سچا امین تھا ۔

ہندوستان کی تازہ صورتحال بھارتی قیادت کے خبث باطن کو بے نقاب کر رہی ہے ۔ دو قومی نظریہ ہی بڑا سچ تھا ، ہندو برہمنوں کا سیکولرازم فریب اور جھوٹ تھا ۔ لیاقت بلوچ نے کہاکہ پاکستان عالمی سطح پر کردار اسی وقت اد ا کرسکتاہے کہ نظریاتی ، ر یاستی ، اقتصادی اور آئینی و پارلیمانی بحرانوں کے خاتمہ کے لیے قومی قیادت قومی ترجیحات پر متحد ہو جائے ۔

شیئر کریں

Top