مہنگائی اور قیمتوں کی سونامی سے لوگوں کی کمر ٹوٹ چکی شیری رحمان

1124838-shireenrehmanx-1521721065-422-640x480-1.jpg

تباہی سرکار آئے دن قیمتوں میں اضافہ کر رہی ہے، دو سال میں ثابت ہو چکا یہ حکومت عوام پر بوجھ ہے،پیپلزپارٹی رہنما
نیپرا نے بجلی کی قیمت میں 1 روپے 62 پیسے فی یونٹ اضافہ کیا ہے۔ حکومت ہر روز منی بجٹ پیش کر رہی، میڈیا سے گفتگو
اسلام آباد(آئی این پی)پیپلزپارٹی کی نائب صدر سینیٹر شیری رحمان نے ملک(باقی صفحہ6بقیہ نمبر15)
میں مہنگائی ،ادوایات اور اشیاء خردونوش کی قیمتوں میں اضافے پر شدید تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ تباہی سرکار آئے دن قیمتوں میں اضافہ کر رہی ہے، دو سال میں ثابت ہو چکا یہ حکومت عوام پر بوجھ ہے،مہنگائی اور قیمتوں کی سونامی سے لوگوں کی کمر ٹوٹ چکی ہے ۔جمعہ کو میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سینیٹر شیری رحمان نیکہا کہ نیپرا نے بجلی کی قیمت میں 1 روپے 62 پیسے فی یونٹ اضافہ کیا ہے۔ حکومت ہر روز منی بجٹ پیش کر رہی، کل یوٹلٹی اسٹور اشیاء کی قیمتوں اضافہ کیا گیا،دو دن پہلے زندگی بچانے کی ادویات کی قیمتوں[L:160] میں اضافہ کیا گیا، ادویات کی قیمتوں میں اضافے کے بعد عوام پر مہنگائی کا ایک اور بم گرایا گیا ہے۔شیری رحمان نے کہا کہ پورا ملک گیس اور بجلی کی شدید لوڈشیڈنگ میں مبتلا ہے۔حکومت کے پاس کوئی جواب اور حل نہیں۔مہنگائی اور قیمتوں کی سونامی سے لوگوں کی کمر ٹوٹ چکی ہے۔ دو سال میں ثابت ہو چکا یہ حکومت عوام پر بوجھ ہے۔کبھی پی آئی اے، کبھی پی ایم ڈی سی تو کبھی پی ٹی ڈی سے کے ملازمین کو بیروزگار کیا جاتا ہے۔ ہمیں ہی لوگوں کے حقوق کا علم اٹھانا ہوگا۔
شیری رحمان

شیئر کریں

Top