موجودہ حکومت کا مزید اقتدار میں رہنا ملکی سلامتی کیلئے خطرہ بن چکا ہے روبینہ خالد

موجودہ حکومت کے شرمناک اقدامات کی وجہ سے آج پوراملک انتشارکاہوچکاہے،پیپلزپارٹی خیبرپختونخوارہنما
اشیائے ضروریہ سمیت ہرچیزکی قیمت میں ہوشربااضافہ ہوا،حکومت کا مزیداقتدارمیں رہنا ملکی سلامتی کیلئے خطرہ بن چکا
پشاور(آئی این پی )پاکستان پیپلزپارٹی خیبرپختونخواکی سیکرٹری اطلاعات سینیٹرروبینہ خالد نے کہاہے کہ موجودہ حکومت کے شرمناک اقدامات کی وجہ سے آج پوراملک (باقی صفحہ6بقیہ نمبر57)
انتشارکاہوچکاہے اوراشیائے ضروریہ سمیت ہرچیزکی قیمت میں ہوشربااضافہ ہواہے اس حکومت کا مزیداقتدارمیں رہنا ملکی سلامتی کیلئے خطرہ بن چکاہے حکومت کی الٹی گنتی شروع ہوچکی ہے اوراسکے کرتوتوں کیخلاف پی ڈی ایم کی تحریک فیصلہ کن ثابت ہوگی انہوںنے مہنگائی کیخلاف ٹائیگرفورس کو متحرک کرنے کے اقدام کومستردکرتے ہوئے اسے حکومت کی ناکامی قراردیا۔ان خیالا ت کااظہارانہوں نے پشاورپریس کلب میں صوبائی ڈپٹی سیکرٹری اطلاعات گوہرانقلابی کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر،راشدآفریدی،شازیہ طہماش،وجاہت،عشبرجدون اورصائمہ عمربھی موجود تھی۔سینیٹرروبینہ خالد نے کہاکہ پیپلزپارٹی کے صدرہمایون خان کی زیرصدارت کابینہ اجلاس میں فیصلہ ہواہے کہ 22نومبرکوپشاورمیں پی ڈی ایم کے جلسے میں پاکستان پیپلزپارٹی اوراسکے کارکن بھرپورشرکت کرینگے قبل ازیں18اکتوبرکوکراچی میں بھی پیپلزپارٹی اپناپاورشوکریگی یہ دن اس لحاظ سے بھی تاریخی حیثیت رکھتاہے جب شہیدبینظیربھٹوطویل جلاوطنی کے بعد اپنے وطن واپس لوٹی تھیں 18اکتوبرکوشہیدبی بی کی آمریت کیخلاف مشن کو آگے لیکرچلیں گے۔انہوں نے کہاکہ وزیراعظم کب سے ڈپٹی کمشنربن گئے ہیں جویہ کہتے ہیں کہ میں نے پی ڈی ایم کوجلسے کی اجازت دیدی ہے مہنگائی کیخلاف حکومتی مشینری بالکل بیٹھ چکی ہے ٹائیگرفورس انتشارکاباعث بنے گی جودکانوں میں گھس کر لوگوں کو تکالیف میں مبتلاکرے گی ملک میں مہنگائی کا طوفان برپا ہے اور اب تو مذہبی منافرت بھی پھیلائی جارہی ہے ہوسکتاہے کہ ملک بلیک لسٹ سے نکل آئے لیکن حکومت کے کالے اورشرمناک کرتوت کاذمہ دارکون ہوگا۔انہوںنے کہاکہ ہرچیزعوام کی قوت خریدسے باہرہوچکی ہے اشیاء خوردونوش،پٹرول کی قیمتوںاوریوٹیلٹی بلزمیں بے تحاشااضافہ ہواہے پرامن احتجاج ہماراجمہوری حق ہے ببانگ دھل کہتی ہوں کہ پی ڈی ایم کی یہ تحریک اب رکنے والی نہیں یہ بلاول بھٹوزرداری کی انیشٹیوتھاجس نے ایک پلیٹ فارم مہیاکرکے آل پارٹی کانفرنس منعقد کی اس تحریک میں پیپلزپارٹی کااہم کرداررہے گاجواپناسافٹ امیج برقراررکھے گی کوئی بھی پرامن تحریک سیاسی قائدین کے بغیرکامیاب نہیں ہوسکتی سیاسی لیڈرزشپ کی موجودگی سے تحریک کسی انتشارکی شکار نہیں ہوگی۔روبینہ خالد نے کہاکہ پی ڈی ایم کے ہرفیصلے متحدہ اپوزیشن کی مشاورت سے ہوتے ہیں اورمولانافضل الرحمن کواسکی سربراہی دینابھی مشترکہ لائحہ عمل کاحصہ ہے پی ڈی ایم کے جلسے کی فنڈنگ اپوزیشن جماعتیں ملکرکریں گی پرامن اندازمیں تحریک چلائینگے لاکھوں لوگ سڑکوں پر ہونگے تو حکومت کوہرصورت جاناپڑے گا۔اس موقع پر گوہرانقلابی نے کہاکہ مہنگائی کیخلاف حکومت کی طرف سے ٹائیگرفورس کو متحرک کرنااس بات کی غمازی کرتاہے کہ حکومت اوراسکے ادارے مہنگائی کوکنٹرول کرنے میں ناکام ہوچکے ہیں مہنگائی بے لگام گھوڑے کی طرح لوگوں کو کچل رہی ہے ٹائیگرفورس کاکردارغیرقانونی وغیرآئینی ہوگا انہوں نے کہاکہ پیپلزپارٹی آل ایمپلائزپنشنرزکے مطالبات کی حمایت کرتی ہے اورایمپلائزکاآج ہونیوالے اسلام آباددھرنے میں پی پی کے کارکن بھی شرکت کرینگے مہنگائی کے تناسب سے پنشن اورتنخواہ میں اضافہ ہوناچاہئے،واپڈا،پی ٹی سی ایل،پی آئی اے،سٹیل ملزاوردیگرملکی اداروں کی نجکاری کسی صورت قابل قبول نہیں ۔
وبینہ خالد

شیئر کریں

Top