ترکی بحیرہ روم مے اشتعال انگیزی سے باز رہے جرمن وزیر خارجہ

download-4.jpg

انقرہ حکومت نے گزشتہ روز اورِک رائس نامی تحقیقی بحری جہاز کو یونانی جزیرے کاستیلورائزو کے جنوبی پانیوں میں گیس کی تلاش کے لیے بھیجنے کا اعلان کیا تھا
برلن(آئی این پی)جرمنی نے ترکی کو متنبہ کیا ہے کہ وہ بحیرہ روم میں اشتعال انگیزی اور کشیدہ تعلقات کے چکر سے اجتناب کرے۔ یہ بات انقرہ حکومت کی طرف سے اپنا ایک تحقیقی بحری جہاز بحیرہ روم کے متنازعہ پانیوں میں گیس کی تلاش کے لیے دوبارہ بھیجنے کے فیصلے کے تناظر میں کی گئی ہے۔ جرمن وزیر خارجہ ہائیکو ماس نے قبرص اور یونان کے اپنے دورے کے موقع پر کہا کہ ترکی کے تازہ اقدام سے خطے میں کشیدگی کو کم کرنے کی کوششوں کو نقصان پہنچے گا۔ انقرہ حکومت نے گزشتہ روز اورِک رائس نامی تحقیقی بحری جہاز کو یونانی جزیرے کاستیلورائزو کے جنوبی پانیوں میں گیس کی تلاش کے لیے بھیجنے کا اعلان کیا تھایہ (باقی صفحہ 6بقیہ نمبر2)
بات انقرہ حکومت کی طرف سے اپنا ایک تحقیقی بحری جہاز بحیرہ روم کے متنازعہ پانیوں میں گیس کی تلاش کے لیے دوبارہ بھیجنے کے فیصلے کے تناظر میں کی گئی ہے۔ جرمن وزیر خارجہ ہائیکو ماس نے قبرص اور یونان کے اپنے دورے کے موقع پر کہا کہ ترکی کے تازہ اقدام سے خطے میں کشیدگی کو کم کرنے کی کوششوں کو نقصان پہنچے گا۔ انقرہ حکومت نے گزشتہ روز اورِک رائس نامی تحقیقی بحری جہاز کو یونانی جزیرے کاستیلورائزو کے جنوبی پانیوں میں گیس کی تلاش کے لیے بھیجنے کا اعلان کیا تھا۔

شیئر کریں

Top