کھلاڑیوں کو کارکردگی پر غلبہ حاصل کرنا چاہیے،ثقلین مشتاق

1494446311591508582.jpg

کھلاڑیوں کا اصل کام میدان میں کھیلنا ہے نہ نگریزی زبان میں کامل ہونا
لاہور(آئی این پی)مایہ ناز آف اسپنر ثقلین مشتاق نے انگلش کا سبق پڑھنے والے کھلاڑیوں کو کارکردگی کی اہمیت یاد دلا دی۔پاکستان کرکٹ بورڈ کے ہیڈ آف پلیئرز ڈیولپمنٹ ثقلین مشتاق نے انگریزی پر عبور حاصل کرنے کے لیے سرگرداں پلیئرز کو کارکردگی کا ہتھیار اپنانے پر زور دیا ہے۔اپنے ایک انٹرویو میںثقلین مشتاق نے کہا کہ کھلاڑیوں کو زبان کی بجائے کارکردگی پر غلبہ حاصل کرنا چاہیے۔نیشنل اسٹیڈیم کراچی میں بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کھلاڑیوں کا اصل کام میدان میں کھیلنا ہے نہ کہ انگریزی زبان میں کامل ہونا۔اسپنر نے کہا کہ پاکستانی کھلاڑیوں کو اردو بولنے پر فخر کرنا چاہیے کیونکہ یہ ہماری قومی زبان ہے، اردو ہماری اپنی زبان ہے اس لیے میرا نہیں خیال کے ہمیں انگلش سیکھنے کی ضرورت ہے اگر کسی تقریب میں یا کہیں انگلش کی ضرورت پڑے تو مترجم ہونے میں کوئی حرج نہیں کیونکہ انگلش ہماری زبان نہیں ہے۔
ان کا کہنا تھا کہ پلیئرز کی کارکردگی ہماری اولین ترجیح ہونی چاہیے، بیٹنگ، بولنگ اور پرفارمنس سے جوڑی چیزوں کو اہمیت دینی چاہیئے آخر کار پلیئرز نے کارکردگی سے ہی دنیا میں غلبہ حاصل کرنا ہے۔

شیئر کریں

Top