انتخابی دھاندلی کیخلاف پیپلز پارٹی کے گلگت بلتستان بھر میں احتجاجی مظاہرے ،نعرے بازی

5c705d1d1658b.jpg

انتخابات میں وفاق نے دھاندلی کی مثال قائم کی، آزاد امیدواروں کوخریدا گیا،مینڈیٹ کو چرانے والوں کیخلاف ہم آخری حدتک جائیں گے،امجد ایڈووکیٹ
جیالوں کے صوبائی دارالحکومت ، سکردو،غذر ،شگر اور استور میں دھرنوں کے باعث بین الاضلاعی سڑکیں بند ہونے سے گاڑیاں کی قطاریں ،مسافروںکو مشکلات
گلگت،سکردو،غذر ،شگر ،استور(نمائندگان بادشمال )پیپلزپارٹی کے انتخابی نتائج کیخلاف گلگت بلتستان بھر میں احتجاجی مظاہرے دوسرے روز بھی جاری رہے، گزشتہ روز گلگت شہر میں جلاو گھیراو کے الزام میں 14افراد کو گرفتار کرلیاگیا ،منگل کے روز کارکنوں نے احتجاج کرتے ہوئے ٹائر جلاکر سٹرکیں بلاک کردیں،اس دوران احتجاجی مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے پیپلزپارٹی کے صوبائی صدرامجد ایڈوکیٹ نے کہا کہ گلگت بلتستان انتخابات میں وفاقی حکومت نے دھاندلی کی مثال قائم کردی،پیسوں کے بریف کیس لیکر آزاد امیدواروں کو خریدنے کیساتھ وزارتوں کے نام پر بھی خریدوفروخت کی گئی، مینڈیٹ کو چرانے والوں کے خلاف ہم آخری حدتک جائیں گے۔ دریں اثناء ، بلتستان ڈویژن کے چاروں اضلاع میں احتجاجی مظاہرے اور دھرنے، مرکزی پیپلز سیکر ٹریٹ کے سامنے سابق وزیر اعلی مہدی شاہ کی قیادت میں کارکنوں نے مین روڈ پر ٹائر جلا کر احتجاج کیا ، وفاق اور الیکشن کمیشن کے خلاف شدید نعرے بازی، جیالوں کی احتجاجی ریلی گمبہ سے جیالوں نے احتجاجی ریلی نکالی جیالوں کے دھرنوں کے باعث بین الاضلاعی سڑکیں بند، گانچھے اور کھرمنگ کی سڑکیں گول گا ؤں میں دھرنے کے باعث ٹریفک کے لیے بند ہو گئیں، مہدی شاہ نے کہا کہ ہمارے کسی ورکر کو گرفتار کیا گیا تو انکی خیر نہیں، گلگت بلتستان ہمارے بزرگوں نے آزاد کیا ہے، میں آرمی چیف کو بتانا چاہتا ہوں کہ ایک گنڈا پور نے پورے گلگت بلتستان کے امن کو خراب کر دیا ہے۔دریں اثناء ڈی سی چوک گاہکوچ میں جنرلسیکرٹری پی پی پی غذر بختاورشاہ کی قیادت میں سینکڑوں کارکنوں نے ٹائر جلاکر احتجاج کی اور گلگت غذر روڈ کو ہر قسم کے ٹریفک لے لیے بلاک کردی مظاہرین نے چیف الیکشن کمشنر جی بی اور گنڈاپور مردہ باد کے نعرے لگاتے رہے ۔اس موقع پر جنرل سیکریٹری پی پی پی ضلع غذر بختاور شاہ و دیگر نے کہا کہ پی ٹی آئی نے چیف الیکشن کمشنر سے ملکر ریکارڈ دھاندلی کی ہے اس لیے ہمیں یہ نتیجہ منظور نہیں ہے اور جب تک انصاف نہیں ملتا ہے ہم اپنے حق کے لیے احتجاج کرتے رہیں گے ۔دریں اثناء شگر میں پیپلز پارٹی کے کارکنوں کا حسن شہید چوک پر مبینہ دھاندلی کیخلاف احتجاج، ٹائز جلا کر شاہراہ کے ٹو ہر قسم کی ٹریفک کیلئے بلاک کردیا۔اور الیکشن کمشنر گلگت بلتستان اور وفاقی وزیر امین گنڈا پور کیخلاف سخت نعرہ بازی کرتے رہے ۔ جبکہ ووٹ پر ڈھاکہ نامنظور اور جمیل کیساتھ ناانصافی نامنظور کے نعرے بھی لگاتے رہے۔ اس دوران سڑک کے دونوں جانب مسافر گاڑیاں پھنس گئے۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مظاہرین کا کہنا تھا کہ صوبائی صدر امجد ایڈوکیٹ کے حکم پر انتخابی دھاندلی کے خلاف ضلع شگر میں احتجاج کا سلسلہ جاری رہے گا۔ کیونکہ گلگت بلتستان حلقہ 2 میں پاکستان پیپلز پارٹی کا امیدوار جمیل احمد کے ساتھ ہونے والی ناانصافی ہوئی ہے۔جسے وفاقی وزیر علی امین گنڈا پور کی ایماء پر چیف الیکشن کمشنر نے جیتے ہوئے نمائندے کو دھاندلی کے بدترین مثال قائم کرتے ہوئے ہارے ہوئے نمائندے کو جتادئے ہیں۔جوکہ ناقابل قبول ہے۔جبکہ جمیل احمد کیساتھ انصاف نہیں کرینگے احتجاج کا سلسلہ جاری رہے گا۔
احتجاجی مظاہرے

شیئر کریں

Top