چلاس چار میگاواٹ لاگت 1 ارب 26کروڑ پولی ٹیکنیکل انسٹیٹیوٹ 37 کروڑ 8لاکھ اہم منصوبوں کا سلام آباد میں ٹینڈر علاقے کے حقوق پر ڈاکہ ہے: اپوزیشن لیڈر

index-5.jpeg

صوبے کا ڈھونگ رچانے والے بنیادی اختیارات بھی اسلام آباد منتقل کر رہے ہیں، نیازی سرکار گلگت بلتستان کو کچھ دینے کے بجائے پہلے سے موجود اختیارات بھی چھین رہی ہے،پی پی صورتحال پرخاموش نہیں رہیگی
گلگت بلتستان کے فیڈرل پی ایس ڈی پی کے پراجیکٹ سکے ٹینڈرز گلگت بلتستان میں ہی ہونے چاہئیں اگر وفاقی وزیر اندھیر نگری سمجھ کر بڑے پیمانے پر سودا کرے گا تو پیپلز پارٹی بھرپور جواب دے گی،امجدایڈووکیٹ
گلگت ( بادشمال رپورٹ)پیپلزپارٹی گلگت بلتستان کے صوبائی صدر و اپوزیشن لیڈر امجد حسین ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ گنڈا پور نے حکومت بنتے ہی گلگت بلتستان کے اربوں روپے کے پراجیکٹس کا سودا اسلام آباد میں طے کرلیا وفاقی وزیر نے کمیشن خوری کیلئے گلگت بلتستان کے منصوبوں کے ٹینڈر اسلام آباد میں رکھوائے جن میں چلاس میں چار میگاواٹ پاور پراجیکٹ جس کی لاگت 1 ارب 26 کروڑ ہے اور سکردو میں بننے والے پولی ٹیکنیک انسٹیٹیوٹ جس کی لاگت 37 کروڑ 80 لاکھ ہے ان منصوبوں کے ٹینڈر اسلام آباد میں رکھوانا علاقے کے حقوق پر ڈاکہ زنی ہے ایسے پراجیکٹس کے ٹینڈرز متعلقہ محکموں نے گلگت بلتستان میں ہی کرنا ہوتا ہے مگر گنڈا پور نے کرپشن اور لوٹ مار کیلئے دو بڑے پراجیکٹس کا اسلام آباد میں ہی سودا کر لیا عمران نیازی اور مافیا نے پارکس کے نام پر عوامی چراگاہوں پر قبضے، گندم کے کوٹے میں کٹوتی اور اب اہم منصوبوں کے ٹینڈر اسلام آباد میں طلب کر کے گلگت بلتستان کے عوام کو تبدیلی کا ٹیکہ لگا دیا صوبے کا ڈھونگ رچانے والے بنیادی اختیارات بھی اسلام آباد منتقل کر رہے ہیں۔ نیازی سرکار گلگت بلتستان کو کچھ دینے کے بجائے پہلے سے موجود اختیارات بھی چھین رہی ہے۔ بدقسمتی سے گلگت بلتستان میں تبدیلی کے نام پر تنزلی کا آغاز ہو چکا ہے۔گلگت بلتستان کے منصوبوں کا ٹینڈر بھی اسلام آباد میں ہونا ہے تو یہاں کے عوام کہاں جائیں بلخصوص گلگت بلتستان سے تعلق رکھنے والی تعمیراتی کمپنیاں کہاں جاینگی اگر یہ ٹینڈرز منسوخ کر کے گلگت بلتستان میں ہی متلعقہ محکموں کے ذریعے نہیں کرائے گئے تو پیپلز پارٹی کبھی خاموش نہیں رہے گی گنڈا پور گلگت بلتستان کے وسائل کو دونوں ہاتھوں لوٹ رہاہے ہم نے گلگت بلتستان کے وسائل کے تحفظ کی قسم کھائی ہے گلگت بلتستان کے وہ تمام پراجیکٹس جو فیڈرل پی ایس ڈی پی کے ہیں ان کے ٹینڈرز سابقہ روایات کی طرح گلگت بلتستان میں ہی ہونے چاہیے اگر وفاقی وزیر اس طرح سے اندھیر نگری سمجھ کر بڑے پیمانے پر سودا کرے گا تو پیپلز پارٹی بھرپور جواب دے گی پیپلز پارٹی کے صوبائی صدر و اپوزیشن لیڈر گلگت بلتستان نے مزید کہا کہ ملک بھر میں پی آئی اے کے کرایوں میں کمی کی گئی ہے مگر گلگت بلتستان کو اس سے بھی محروم رکھا گیا ہے۔ گلگت بلتستان کا عوامی مینڈیٹ سہولت کاروں کے ذریعے اس لئے چرایا گیا تھا کہ کٹھ پتلیوں کو اقتدار میں لاکر ایسے ظالمانہ اور جابرانہ فیصلے مسلط کئے جاسکیں۔ گنڈا پور نے گلگت بلتستان کے منصوبوں سے کمیشن خوری کا آغاز کر دیا ہے اور اس مقصد کے لئے ان منصوبوں کے ٹینڈر اسلام آباد میں طلب کئے گئے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ پیپلز پارٹی گلگت بلتستان اسمبلی کے اندر اور باہر ان غیر منصفانہ اقدامات کے خلاف شدید مزاحمت کرے گی۔ ہم نے گلگت بلتستان کے عوام کے حقِ ملکیت اور حقِ حاکمیت سمیت عبوری آئینی صوبے کے ایجنڈے پر عوامی حقوق کی جدوجہد کی اور ہمارے مرکزی قیادت نے بھی گلگت بلتستان کے ان بنیادی مسائل پر ہمارا بھرپور ساتھ دیا اور ہم نے اسی ایجنڈے پر الیکشن لڑا اور عوامی معاملات کے لئے جدوجہد کرنے کی پاداش میں سہولت کاروں کے ذریعے ہمارے مینڈیٹ پر شب خون مارا گیا
اپوزیشن لیڈر

شیئر کریں

Top