پٹرول 2.31فی لیٹر ایل بی گی 15 روپے فی کلو مہنگی حکومت کا نئے سال کا عوام کو تحفہ

pakistan-increases-petrol-price-by-rs2-31-litre-in-new-year-gift-1609421328-7168.jpg


گھریلو سلنڈر 1.80 اور کمرشل سلنڈر کی قیمت میں 692 اضافہ، اوگرا نے پٹرول 10.68 ڈیزل 8.37 روپے فی لیٹر اضافے کی سفارش کی تھی
،ڈیزل کی قیمت میں 1.80روپے کا اضافہ ،پٹرول 106روپے ، ڈیزل110روپے 24 پیسے فی لیٹر کا ہوگیا،15جنوری تک گیس کی سپلائی بند
اسلام آ باد(آئی این پی ) ایل پی جی 15روپے فی کلو اضافے کے بعد 132 روپے سے بڑھ کر 147 روپے فی کلو ہوگئی،گھریلو سلنڈر کی قیمت میں 180 روپے اور کمرشل سلنڈر کی قیمت میں 692 روپے اضافہ کیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق بجلی اور پیٹرولیم مصنوعات کے بعد حکومت کی جانب سے عوام کے لیے 2021 کا ایک اور تحفہ آگیا ہے، اور ایل پی جی کی قیمت میں ایک ریکارڈ اضافہ کیا گیاہے، جس کے تحت فی کلو ایل پی جی 15 روپے مہنگی ہوگئی ہے۔ ایل پی جی ایسوسی ایشن کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ جنوری 2021 سے ایل پی جی کی قیمت 132 روپے فی کلو کے جگہ 147 فی کلو ہوگی، گھریلو سلنڈر کی قیمت میں بھی 180 روپے کا اضافہ کیا گیا ہے، جس کے بعد گھریلو سلنڈر 1553 کی جگہ 1733 میں دستیاب ہوگا، جب کہ کمرشل سلنڈر کی قیمت میں بھی 692 روپے اضافہ کردیا گیا ہے۔چئیرمین ایل پی جی ایسوسی ایشن کا کہنا ہے کہ بین الاقوامی مارکیٹ میں ایل پی جی کی فی میٹرک ٹن قیمت میں 79 ڈالر اضافہ ہوا ہے، جس کے بعد ایل پی جی کی قیمت 457 ڈالر سے بڑھ کر 536 ڈالر پر پہنچ گئی ہے۔ چئیرمین ایل پی جی ایسوسی ایشن نے کہا ہے کہ ایل پی جی پر لیوی سمیت تمام ٹیکسز کا خاتمہ نہ کیا گیا تو 15 جنوری 2021 سے خیبر سے کراچی تک گیس کی سپلائی بند کر دیں گے۔
گیس
اسلام آ باد(آئی این پی ) وفاقی حکومت نے عوام پر نیا سال کا بم گراتے ہوئے پٹرول کی قیمت میں 2 روپے 31 پیسے کا اضافہ کر دیا ہے،پٹرول کی قیمت میں 2.31 روپے ،ڈیزل کی قیمت میں 1.80 روپے کا اضافہ ،پٹرول 106 روپے ، ڈیزل 110 روپے 24 پیسے فی لیٹر کا ہوگیا ۔ جمعرات کو پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی حکومت کی جانب سے عوام کو نئے سال کا تحفہ دیدیا گیا ، پٹرول 106 روپے ، ڈیزل 110 روپے 24 پیسے فی لیٹرکا ہوگیا ۔اوگرا کی جانب سے پٹرول کی قیمت میں 10.68 روپے فی لیٹر جبکہ ڈیزل کی قیمت میں 8.37 روپے فی لیٹر اضافے کی سفارش کی گئی تھی ، عوام کو ممکنہ حد تک ریلیف فراہم کرنے کی حکومتی ترجیحات کو مد نظر رکھتے ہوئے پٹرول کی قیمت میں محض 2.31 روپے جبکہ ڈیزل کی قیمت میں 1.80 روپے فی لیٹر اضافہ منظور کیا گیا ہے۔ فی لٹر پٹرول کی قیمت 2 روپے 31 پیسے اضافے کے بعد 106 روپے ہو گئی ہے۔ ڈیزل کی قیمت میں 8 روپے 37 پیسے تک اضافہ کی سمری مسترد کر دی گئی ہے، وزیراعظم عمران خان نے صرف 1 روپے 80 پیسے تک اضافہ کرنے کی منظوری دی ہے ۔ ڈیزل کی نئی قیمت 110 روپے 24 پیسے ہوگئی۔اوگرا کی جانب سے کیروسین (مٹی کاتیل) میں 10.92 روپے فی لیٹر جبکہ لائٹ ڈیزل میں 14.87 روپے اضافہ تجویز کیا گیا تھا۔ اس کے برعکس کیروسین کی قیمت میں 3.36 روپے جبکہ لائٹ ڈیزل کی قیمت میں محض 3.95 روپے اضافہ کیا گیا ہے۔ یاد رہے کہ گزشتہ روز اوگرا نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی سمری پیٹرولیم ڈویژن کو بھجوائی تھی۔ اوگرا کی سمری میں پیٹرول 2 روپے 96 پیسے فی لیٹر مہنگا کرنے کی تجویز دی گئی تھی۔ذرائع کے مطابق حکومت ہائی سپیڈ ڈیزل 3 روپے 12 پیسے فی لیٹر مہنگا کرنے پر غور کیا جا رہا تھا جبکہ مٹی کا تیل اور لائٹ ڈیزل کی قیمت بھی اضافہ کرنے کی تجویز زیر غور تھی۔یاد رہے کہ ابھی پندرہ روز قبل 15 دسمبر کو پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں فی لٹر 5 روپے کا اضافہ کیا گیا تھا۔وزارت خزانہ کی طرف سے جاری کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق پیٹرول کی فی لٹر قیمت اس وقت 103 روپے 69 پیسے ہے۔ دوسری طرف ہائی سپیڈ ڈیزل 3 روپے اضافے کے بعد 108 روپے 44 پیسے پر فروخت ہو رہا ہے جبکہ مٹی کا تیل 5 روپے اضافے کے بعد 70 روپے 29 پیسہ کا کر دیا گیا تھا۔ لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت بھی 5 روپے اضافے کے بعد 67 روپے 86 پیسہ فی لیٹر مقرر ہے۔
پیٹرول

شیئر کریں

Top