عوامی مینڈیٹ پر ڈاکہ ڈالنے والوں کی عملداری نظر نہیں آرہی :سعدیہ دانش

Sadia-Danish3-copy.jpg

دودھ اور شہد کی نہریں بہانے کی مثالیں دیکر اقتدار حاصل کرنے والے سلیکٹڈ نے ملک میں غریبوں سے جینے کا حق چھین لیا ہے
صوبائی حکومت بھی طاقت کے غیر سرکاری مراکز نے اپنے اہداف حاصل کرنے کے لئے بزداروں کو جمع کر کے تشکیل دی ہے
گلگت(بادشمال نیوز)پیپلز پارٹی گلگت بلتستان کی رکن اسمبلی و صوبائی سکریٹری اطلاعات سعدیہ دانش نے کہا ہے کہ مہنگائی میں مسلسل اضافہ اور عوام کش فیصلوں سے صاف ظاہر ہوتا ہے کہ تبدیلی سرکار کارکردگی دکھانے میں ناکام ہوگئی ہے۔ دودھ اور شہد کی نہریں بہانے کی مثالیں دیکر اقتدار حاصل کرنے والے سلیکٹڈ نے ملک میں غریبوں سے جینے کا حق چھین لیا ہے۔ ریاستِ مدینہ بنانے کے دعوے دار نے ملک کو مشکل ترین مرحلے میں کھڑا کردیا یے۔ انتخابات میں ووٹوں کے بدلے ہزاروں ارب روپے کے اعلانات کرنے والے گدھے کے سر سے سینگ کی طرح غائب ہو گئے ہیں۔ گلی محلے میں کالجوں اور سکولوں کے اعلانات کرنے والے موجودہ تعلیمی اداروں میں جدید سہولیات مہیا کریں تو بڑی بات ہوگی۔ گزشتہ دو سال سے جس طرح حکومت وفاق میں ناکام ہوئی تھی ٹھیک اسی طرح گلگت بلتستان کی صوبائی حکومت سے بھی کسی اچھی کارکردگی کی امید نہیں ہے کیونکہ صوبائی حکومت بھی طاقت کے غیر سرکاری مراکز نے اپنے اہداف حاصل کرنے کے لئے بزداروں کو جمع کر کے تشکیل دی ہے۔ اس وقت گلگت بلتستان میں حکومت کی کوئی عملداری نظر نہیں آرہی ہے ایسا لگ رہا ہے کہ نگراں حکومت کام کررہی ہے۔ گلگت بلتستان کے انتخابات میں بدترین دھاندلی اور عوامی مینڈیٹ پر ڈاکہ ڈال کر زبردستی اقتدار میں آنے والی حکومت کی ابھی تک کوئی کارکردگی نظر نہیں آئی۔ تاحال صوبائی حکومت کی جانب سے کوئی ایسے فیصلے سامنے نہیں آئے جن سے عوام کو ریلیف ملنے کا کوئی امکان ہو۔ گلگت شہر سمیت گلگت بلتستان کے اکثر اضلاع میں بجلی کی بدترین لوڈ شیڈنگ ہے ایک طرف خون کو جما دینے والی سردی اور دوسری طرف بجلی کی لوڈ شیڈنگ سے عوام کی مشکلات میں اضافہ ہوا ہے حکومت حلف لینے کے بعد مسلسل ایک ماہ سے اسلام آباد میں موجود ہے وزرا پروٹوکول کے مزے لے رہے ہیں جبکہ عوام کو مسائل اور مشکلات کا سامنا ہے۔ حکومت گلگت میں بجلی بحران پر قابو پانے کے لئے عملی اقدامات اٹھائے ۔
سعدیہ دانش

شیئر کریں

Top