سی پیک کے ذریعے اقتصادی رابطے وسط ایشیا اور سری لنکا تک بڑھائے جاسکتے ہیں، وزیراعظم عمران خان

index-4.jpeg

پاکستان اور سری لنکا کو ایک جیسے چیلنجز کا سامنا ہے جنہیں مواقع میں بدلنا ہے، دہشتگردی کے خلاف جنگ میں پاکستان نے70ہزار سے زائد جانیں دیں، پاکستان اور سری لنکا مل کر تجارتی ترقی کی منازل طے کرسکتے ہیں،سری لنکا کا پہلا دورہ اس وقت کیا جب کرکٹ کیریئر شروع کر رہا تھا،سری لنکن ٹیم کو ٹیسٹ اسٹیٹس دلانے میں کردار آج بھی یاد ہے،سری لنکن وزیر اعظم کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس
وزیراعظم عمران خان کے ساتھ مذاکرات میں مختلف شعبوں میں تعاون پر اتفاق ہوا ہے،مہندراراجہ پکسے
دونوں فریقین نے تجارت سرمایہ کاری،صحت تعلیم ، زراعت ، سائنس و ٹیکنالوجی ، سیکیورٹی ، ثقافت اور سیاحت کے شعبوں میں تعلقات کو مضبوط بنانے کے عزم کا اعادہ کیا، وزیر اعظم آفس
کولمبو(آئی این پی) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان اور سری لنکا کو چیلنجز مواقع میں بدلنا ہے، سی پیک کے ذریعے اقتصادی رابطے وسط ایشیا اور سری لنکا تک بڑھائے جاسکتے ہیں، کولمبو میں سری لنکا کے وزیراعظم مہندارا راجہ پکسے کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ سری لنکا کا پہلا دورہ اس وقت کیا جب کرکٹ کیریئر شروع کر رہا تھا،سری لنکن ٹیم کو ٹیسٹ اسٹیٹس دلانے میں کردار آج بھی یاد ہے،وزیراعظم نے کہا کہ سری لنکا دورے کی دعوت اور شاندار میزبانی پر وزیراعظم مہندراراجہ پکسے کا مشکور ہوں،انہوں نے کہا کہ پاکستان سی پیک کا اہم جزو ہے جو علاقائی روابط کے فروغ کی نئی راہیں کھولے گا سی پیک کے ذریعے اقتصادی رابطے وسط ایشیا اور سری لنکا تک بڑھائے جاسکتے ہیں،عمران خان نے کہا کہ پاکستان اور سری لنکا کو ایک جیسے چیلنجز کا سامنا ہے جنہیں مواقع میں بدلنا ہے، دہشتگردی کے خلاف جنگ میں پاکستان نے70ہزار سے زائد جانیں دیں، پاکستان اور سری لنکا مل کر تجارتی ترقی کی منازل طے کرسکتے ہیں،وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ کورونا وبا سے غریب ملک بہت متاثر ہوئے، پاکستان کی آبادی 22 کروڑ ہے ہم صرف 8 ارب ڈالر کا پیکج دے سکے۔ پاکستان اب کورونا کا مقابلہ کر رہا ہے،پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مہندراراجہ پکسے نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کے ساتھ مذاکرات میں مختلف شعبوں میں تعاون پر اتفاق ہوا ہے،اس سے قبل وزیر اعظم عمران خان نے سری لنکا کے ہم منصب مہندا راجہ پاکسے کے ساتھ ون آن ون ملاقات کی جس میں دوطرفہ اورعلاقائی اہمیت کے امور پرتبادلہ خیال کیا گیا،وزیر اعظم میڈیا آفس سے جاری بیان کے مطابق دونوں رہنماؤں نے سری لنکا کے وزیر اعظم کے دفتر ٹیمپل ٹریس میں منعقدہ اجلاس میں متنوع شعبوں میں تعلقات کو مضبوط بنانے کے عزم کا اظہار کیا،دونوں فریقین نے تجارت وسرمایہ کاری،صحت ،تعلیم ، زراعت ، سائنس و ٹیکنالوجی ، سیکیورٹی ، ثقافت اور سیاحت کے شعبوں میں تعلقات کو مضبوط بنانے کے عزم کا اعادہ کیا،قبل ازیں وزیر اعظم مہندا راجا پاکسے نے منگل کی سہ پہر بندرانائیکے انٹرنیشنل ایئرپورٹ پہنچنے پر وزیراعظم عمران خان کا استقبال کیا،وزیر اعظم عمران خان گذشتہ سال صدر گوٹبیا راجپاکسہ اور وزیر اعظم مہندا راجاپاکسے کے اقتدار سنبھالنے کے بعد سری لنکا کا دورہ کرنے والے پہلے سربراہ حکومت ہیں، جو دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کی اہمیت کی عکاسی کرتے ہیں،وہ اپنے سری لنکا کے ہم منصب کی دعوت پر سری لنکاکا دورہ کر رہے ہیں

شیئر کریں

Top