کرونا وار نے گہن لگادیا، بڑھتے کیسز کے باعث پی ایس ایل6کوملتوی کردیا گیا

cover_1614845130bnn.jpg

پی ایس ایل انتظامیہ کی لاپرواہی اور غیر ذمہ داری کے باعث پی ایس ایل کو ملتوی کرنا پڑا، کھلاڑیوں اور حکام کو کرونا سے محفوظ رکھنے کیلئے مناسب اقدامات نہ کئے گئے، کھلاڑی اور حکام جس ہوٹل میں ٹھہرائے وہاں شادی کی تقریبات چلتی رہیں
پی ایس ایل کھلاڑیوں کے ساتھ لوگوں کو ہوٹل کی لفٹ میں آتے جاتے دیکھا گیا
کراچی(آئی این پی) پاکستان سپر لیگ(پی ایس ایل ) کے چھٹے ایڈیشن میں کورونا کے بڑھتے کیسز کے باعث لیگ ملتوی کردیا گیا۔تفصیلات کے مطابق پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے پی ایس ایل 6 میں کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز کے باعث 20فروری سے شروع ہونے والی لیگ کو ملتوی کردیا گیا ہے۔پی سی بی اور ٹیم مالکان کے درمیان منعقدہ ورچوئل میٹنگ کے بعد پاکستان کرکٹ بورڈ نے پاکستان سپر لیگ 6کو فوری طور پر ملتوی کرنے کا اعلان کیا۔پی سی بی اب فوری طور پر تمام 6ٹیموں کے شرکا کی پی سی آر ٹیسٹنگ، کورونا ویکسین اور آئسولیشن سہولیات کے لیے اقدامات کرے گا۔قومی ٹیم کے فاسٹ بولر حسن علی نے ٹوئٹ کرتے ہوئے کہا پی ایس ایل کو نظر لگ گئی۔دوسری جانب چند گھنٹے قبل کراچی کنگز کے آسٹریلوی کھلاڑی ڈینیئل کرسٹین نے پی ایس ایل 6 سے دستبرداری کا اعلان کردیا تھا جس کی تصدیق پی سی بی نے خود کرتے ہوئے کہا کہ کراچی کنگز کے آل رانڈر ڈین کرسٹین دبئی روانہ ہورہے ہیں۔ذرائع کے مطابق قومی ٹیم کے سابق کپتان اور کراچی کنگز کے بولنگ کوچ وسیم اکرم بھی پی ایس ایل چھوڑنے کے حوالے سے مشاورت کررہے تھے کیوں کہ ڈاکٹرز نے انہیں مشورہ دیا تھا کہ وہ فورا لیگ چھوڑدیں کیوں کہ ذیابطیس کی وجہ سے انہیں خطرہ ہو سکتا ہے ۔پی ایس ایل انتظامیہ کی لاپرواہی اور غیر ذمہ داری کے باعث پی ایس ایل کو ملتوی کرنا پڑا، ٹورنامنٹ کے دوران کھلاڑیوں اور حکام کو کرونا سے محفوظ رکھنے کے لئے مناسب اقدامات نہیں کئے گئے، پی ایس ایل کھلاڑی اور حکام جس ہوٹل میں ٹھہرائے گئے تھے وہاں شادی کی تقریبات چلتی رہیں۔ پی ایس ایل کھلاڑیوں کے ساتھ لوگوں کو ہوٹل کی لفٹ میں آتے جاتے دیکھا گیا، پی ایس ایل انتظامیہ نے کھلاڑیوں کو نہ ہی ایس او پیز سے آگاہ کیا،نہ ہی کوئی خاطر خواہ اقدامات کئے گئے۔پی ایس ایل سیزن 6 کے لئے استنبول میں ہونے والی افتتاحی تقریب پربڑی رقم لگائی گئی، مگر کھلاڑیوں کی حفاظت کیلئے کچھ نہ کیا گیا، لیگ میں شامل کھلاڑیوں اور حکام کے کرونا ٹیسٹ مثبت آنے پر بھی ہنگامی اقدامات نہیں کئے گئے۔اربوں روپے کی سرمایہ کاری کے باوجود پی ایس ایل انتظامیہ اور پی سی بی کی غیر سنجیدگی نظر آئی، ایونٹ کے دوران فرنچائز مالکان کو ایس اوپیز سے متعلق اعتماد میں نہیں لیا گیا۔پی ایس ایل کے آغاز سے اب تک سات افراد کووڈ کا شکار ہوچکے ہیں، جس کے باعث کراچی کنگز سے تعلق رکھنے والے ڈین کرسچن نے بھی پی ایس ایل 6سے دستبرداری کا فیصلہ کیا تھا، آسٹریلیا سے تعلق رکھنے والے کراچی کنگز کے آل را نڈر 12 بجے کی فلائٹ سے دبئی روانہ ہوجائیں گے۔

شیئر کریں

Top