افغانستان، الگ الگ بم دھماکوں میںانٹیلی جنس اہلکار سمیت 4 افراد ہلاک،7زخمی

GettyImages_1153088834.0.jpg

کابل(شِنہوا)افغانستان کے جنوبی صوبے ہلمند اور مشرقی صوبے ننگرہار میں الگ الگ بم دھماکوں میں ایک انٹیلی جنس اہلکار سمیت کم از کم 4 افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔مقامی حکومت کے ایک اہلکار نے ہفتے کے روز نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر شِنہوا کو بتایا کہ ہلمند کے صوبائی دارالحکومت لشکرگاہ میں ہونیوالے کار بم دھماکے میں صوبائی انٹیلی جنس اہلکار سمیت 3 افراد ہلاک اور 7 دیگر زخمی ہو گئے ہیں جن میں سے بیشتر راہگیر شہری ہیں۔انہوں نے کہا کہ صبح ہجوم کے وقت صوبائی پولیس اسٹیشن کے باہر ہونیوالے دھماکے کی تفیصلات سے میڈیا کو بعد میں آگاہ کیا جائیگا۔علاقائی ہسپتال کے ترجمان گل زاد سنگر نے شِنہوا کو بتایا کہ صوبہ ننگرہار کے دارالحکومت جلال آباد میں بلدیہ ضلع 7 کے عوامی نمائندے اور مقامی بزرگ اس وقت ہلاک ہوئے جب زنگل باغ کے علاقے میں صبح کے وقت ان کی گاڑی ایک بم دھماکے کی زد میں آ گئی۔ابھی تک کسی بھی گروہ نے حملوں کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔ہفتے کے روز ہونیوالے دھماکے سرکاری عہدیداروں اور مقامی بزرگوں کیخلاف سلسلہ وار ٹارگٹڈ حملوں میں تازہ ترین ہیں۔

شیئر کریں

Top