گلگت بلتستان کے تمام اداروں کی کارکردگی صفر ،تعمیروترقی کا عمل رک چکا:حفیظ الرحمن

78403bd0f8d17ce59cb36cbe7b0deb28_XL-1.jpg

سلیکٹڈ حکومت نے غیرترقیاتی بجٹ میں اضافہ کیا اور اسی غیرترقیاتی فنڈز میں حکومت ڈوب چکی ہے،ن لیگ گلگت بلتستان کی صورتحال پر گہری نظر رکھی ہوئی
سلیکٹڈ حکمرانوں کی نااہلی کی بدولت ملک میں بدترین لوڈشیڈنگ،مہنگائی،بیروزگاری اور بدترین معیشت کے تحفے قوم کو ملے،سابق وزیر اعلیٰ کا تقریب سے خطاب
گلگت(بادشمال نیوز)12 اکتوبر 1999 کو منتخب جمہوری حکومت کو جبراً رخصت کرنے کے 22 سال مکمل ہونے پرن لیگ سینٹرل سیکرٹریٹ گلگت میں یوم سیاہ کے حوالے سے زیرصدارت سابق وزیراعلی و صوبائی صدر ن لیگ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن اجلاس منعقد ہوا۔اجلاس میں ن لیگ گلگت بلتستان کے سینئر رہنما اور کارکنوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے حفیظ الرحمن نے کہاکہ آج وفاقی سلیکٹڈ حکومت کے اثرات گلگت بلتستان میں پہنچ چکے ہیں۔گلگت بلتستان نازک صورتحال سے گزر رہاہے۔امن و امان کی صورتحال مخدوش ہے۔سرپرستی نہ ہونے کے باعث تمام اداروں کی کارکردگی صفر ہوچکی ھے۔ادارے عوام کا اعتماد کھو رہے ہیں تعمیروترقی کا عمل رک چکا ۔سلیکٹڈ حکومت نے غیرترقیاتی بجٹ میں اضافہ کیا اور اسی غیرترقیاتی فنڈز میں حکومت ڈوب چکی ھے۔ن لیگ گلگت بلتستان کی صورتحال پر گہری نظر رکھے ہوئے ہے بھرپور اپوزیشن کا کرداد ادا کرکے قوم کی آواز بنیں گے 12 اکتوبر 1999 کے دن کو پاکستان کی جمہوری تاریخ میں ایک سیاہ دن کے طور پر یاد رکھا جائے گاجب ایک منتخب عوامی حکومت کو ایک آمر پرویز مشرف نے گراکر اپنی ذاتی خواہش کی تکمیل کیلئے آمریت مسلط کی ترقی اور خوشحالی کی طرف قدم بہ قدم چلنے والے پاکستان کو نہ ختم ہونے والی دہشت گردی،مذہبی تشدد پسندی کی آگ میں جھونک دیا جس سے ہزاروں معصوم پاکستانی شہری شہید ہوئے علاوہ ازیں انکی نااہلی کے بدولت ملک میں بدترین لوڈشیڈنگ,مہنگائی,بیروزگاری اورمعاشی تباہیکے تحفے قوم کو ملے سابق وزیراعظم نواز شریف اور ان کے خاندان اور ن لیگ کی لیڈر شپ نے ملک میں جمہوریت کی بقا کیلئے پاکستان کے تاریخ کی قربانیاں دے رہے ہیں۔جمہوری اقدار کے تحفظ ووٹ کی عزت,خدمت کو عزت اس طویل جدوجہد کا ثمر ھے جوبہت جلد ملک اور قوم کو ملے گا اور قائداعظم محمد علی جناح کے پاکستان جوکہ صرف جمہوری اقدار کے تحفظ کیلئے بناتھا۔اس خواب کی تعبیر محمد نواز شریف کی قیادت میںن لیگ کی لیڈر شپ بھرپور طریقے سے لڑرہی ھے۔منزل قریب ھے اور قائداعظم کا پاکستان بن کے رہے گا۔سابق وزیراعلی حفیظ الرحمن نے مزید کہاکہ بہترین قومیں وہ ہوتی ہیں جو اپنے ماضی کی غلطیوں سے سبق سیکھتی ہیں اور بہتر مستقبل کیلئے بہتر انداز میں آگے بڑھتی ہیں۔بدقسمتی سے پاکستان میں ماضی کی غلطیوں کو بار بار دھرایا جاتا ھے۔اور آج بھی بدقسمتی سے ایک ہائبرڈ نظام چل رہا ھے جوکہ مارشلا کی جدید شکل ھے۔ملک میں دہشتگردی,بیروزگاری,لوڈشیڈنگ اور مہنگائی کا راج ھے۔خارجہ پالیسی مکمل ناکام ہوچکی ھے اور کشمیر کو انڈیا کی جھولی میں جھونک دیا ھے۔آج پوری قوم نواز شریف کی طرف دیکھ رہی ھے۔یہ ایک مسلمہ حقیقت ھے کہ جب بھی ملک میں مشکل صورتحال پیدا ہوئی تو قوم نے محمد نواز شریف اورن لیگ کو دیکھتی ھے۔آج پورے ملک میں ن لیگ عوام کی پسندیدہ اور مقبول جماعت بن چکی ھے۔ملک کو اس صورتحال سے صر ف ن لیگ ہی نکال سکتی ھے۔اس کیلئے ضروری ھیکہ صاف اور شفاف الیکشن ھو اور ایک جمہوری عوامی حکومت کا قیام ہو۔
حفیظ الر حمن

شیئر کریں

Top