اساتذہ کی کمی ،طلباء و طالبات کا شدید سردی کے باوجود احتجاج محکمہ تعلیم کیخلاف نعرے بازی

g18.jpg

والدین اور طلبہ نے مڈل سکول طورغون میں اساتذہ کرام کی کمی اورتعلیم کاحرج ہونے کے خلاف احتجاج کیااورنعرے بازی کی
ڈپٹی ڈائریکٹر محکمہ تعلیم غلام محمد حیدری طورغون روانہ ہوگئے،اساتذہ کوتعینات کرکے طلبہ کامستقبل بچایاجائے،والدین کامطالبہ
کھرمنگ ( نبی علی رضا) کھرمنگ کے بالائی علاقہ طورغون مڈل سکول میں اساتذہ کرام کی کمی پر سکول کے طلبا و طالبات نے سخت سردی کے باوجود شدید احتجاج دھرنا دیا والدین اور طالب علموں نے مڈل سکول طورغون میں استاتذہ کرام کی کمی کے خلاف شدید نعرہ بازی کیں تعلیم ہر شہری کا بینادی حق ہے مگر ضلع کھرمنگ کے بالائی علاقہ محکمہ تعلیم کھرمنگ کے نظروں سے اوجھل ہیں واضع رہیمڈل سکول طورغون کے طلبہ و طالبات کا ٹیچر کمی کے خلاف احتجاج کرنے پر مجبور ہوئے اور آج کلاسسز چھوڑ کر محکمہ تعلیم کے خلاف بھرپور احتجاج کرکے محکمہ تعلیم کھرمنگ کو للکارا احتجاجی دھرنے کی خبر سنتے ہی ڈپٹی ڈائریکٹر محکمہ تعلیم غلام محمد حیدری طورغون کی طرف رخت سفر باندھ دیئے تاکہ حالات کا مکمل جائزہ لے سکے طورغون مڈل سکول کے طلبہ و طالبات کے والدین نے وزیر تعلیم گلگت بلتستان ،سیکرٹری تعلیم گلگت بلتستان سے پرزور مطالبہ کیا ہے کہ جلد از جلد طورغون ہائی سکول میں مدرس تعینات کرکے مستقبل کے معماورں کی زندگیوں کو بچایا جائے۔دریں اثناء بلتستان سٹوڈنٹس فیڈریشن کے رہنما قمرنجمی نے کہاہے کہ کھرمنگ کے بالائی علاقہ طورغون مڈل سکول کے 200 طالب علموں ایک مدرس کے رحم وکرم پر طلبہ و طالبات کا ٹیچر کمی کے خلاف احتجاج کررہے ہیںبلتستان اسٹوڈنٹس فیڈریشن اس احتجاج کی بھر پور حمایت کرتے ہے اور مطالبہ کرتے یے کہ طوغون مڈل سکول میں ٹیچنگ سٹاف کی کمی کو جلد از جلد پورا کیا جائے۔

شیئر کریں

Top