پاکستان ویمن ٹیم نے سری لنکا کو دوسرے ٹی ٹوئنٹی میچ میں شکست دیکر سیریز اپنے نام کرلی

2327247-match-1653571000-876-640x480-1.jpg

کراچی: پاکستان ویمن ٹیم نے دوسرے ٹی ٹوئںٹی میچ میں سری لنکا کو 7 وکٹوں سے شکست دے کر تین میچوں کی انٹرنیشنل سیریز اپنے نام کرلی ہے۔
کوہسار نیوزکے مطابق پاکستان اور سری لنکن ویمن ٹیم کے درمیان 3 ٹی ٹوئنٹی میچوں پر مشتمل سیریز کھیلی جارہی ہے جن میں سے قومی ٹیم نے آغاز کے دونوں میچز جیت لیے، اس طرح پاکستانی ٹیم نے 2-0 کی برتری کے ساتھ سیریز اپنے نام کرلی۔ عائشہ نسیم نے ناقابل شکست دھواں دار بیٹنگ کرکے پاکستان کو فتح سے ہمکنار کرنے میں اہم کردار ادا کیا اور پلئیر آف دی میچ قرار پائیں۔

مہمان ٹیم میچ میں بے بسی کی تصویر بنی رہی، اسے اپنی ایک اہم کھلاڑی میشا دلہانی کی خدمات سے محروم ہونا پڑا، کراچی کے ساوتھ اینڈ کلب گراؤنڈ پر میزبان سائیڈ نے جیت کے لیے ملنے والا 103 رنز کا آسان ہدف تین وکٹیں گنوا کر 17 ویں اوررز کی پہلی ہی گیند پر حاصل کرلیا، عائشہ نسیم نے جارحانہ انداز میں بیٹنگ کرتے ہوئے 31 گیندوں پر 45 رنز کی عمدہ اور ناقابل شکست اننگ کھیلی، انہوں نے 5 مرتبہ گیند کو باؤنڈری کے پار لگانے کے ساتھ ایک بلند وبالا چھکا بھی رسید کیا۔
قومی ٹیم کی کپتان بسمعہ معروف ایک مرتبہ پھر اچھی بیٹنگ کرنے میں کامیاب رہیں، انہوں نے 22 رنز جوڑے، ارم جاوید نے 18 رنز اسکور کرتے ہوئے 3 چوکے بھی لگائے، منیبہ علی نے 17 رنز بنائے، سماندھیکا کماری، اوشادی رانا سنگھے اور ایما کانچانا نے 1،1 وکٹ باہم تقسیم کی۔
سری لنکا ٹیم کو اپنی ایک اہم کھلاڑی میشا دلہانی کی خدمات سے محروم ہونا پڑا، 20 سالہ اسپنر لیگ انجری کا شکار ہو گئیں، مہمان ٹیم کی فاسٹ بولر اودیشکا پرابو دھانی پہلے ہی کورونا کا شکار ہونے کے سبب سیریز سے باہر ہوگئی تھیں۔ قبل ازیں ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کرنے والی سری لنکا کی ٹیم نے مقررہ 20 اوورز میں 6 وکٹوں پر 102 رنز بنائے۔ ہاسینی پریرا 3 چوکوں کی مدد سے 35 رنز کے ساتھ نمایاں رہیں، نلاکشی ڈی سلوا نے 21 رنز اسکور کیے، ہرشیدانے16، اوشادی نے 8، کپتان چماری اور ایما نے، 5،5 رنز جوڑے، کاوسنا دلہاری 4 اور انوشکا انوشکا ایک رن کے ساتھ ناٹ آؤٹ رہیں۔
طوبی حسن، انعم امین، ندا ڈار، فاطمہ ثنا اور ایمن انور نے 1،1 وکٹ لی، سیریز کا تیسرا اور آخری ٹی ٹوئنٹی ہفتے کو کراچی کے ساؤتھ اینڈ کلب میں ہی کھیلا جائے گا۔ پاکستان نے پہلے میچ میں 6 وکٹوں سے کامیابی پائی تھی، دونوں ممالک کے درمیان یہ 16واں ٹی ٹوئنٹی میچ تھا، پاکستان نے 8 جبکہ سری لنکا نے 6 میچز میں کامیابی حاصل کی ہے، ایک میچ بے نتیجہ رہا تھا۔

ایشیا ہاکی کپ؛ جاپان نے پاکستان کو 3-2 سے شکست دیدی

2327008-ocket-1653544918-715-640x480-2.jpg

جکارتہ: ایشیا ہاکی کپ میں سنسنی خیز میچ میں جاپان نے پاکستان کو دو کے مقابلے میں تین گول سے ہرادیا۔
انڈونیشیا کے دارالحکومت جکارتہ میں جاری مینز ایشیا ہاکی کپ کے اہم میچ میں جاپان نے پاکستان کے خلاف 14 ویں منٹ میں ریوما اوکا نے فیلڈ گول کرکے ٹیم برتری دلائی، جس کے بعد 15 ویں منٹ میں اکیومی سیگی نے فیلڈ گول اسکور کیا جبکہ 27 ویں منٹ میں جاپان کے تاکوما نیوا نے گول کرکے 3 گولز کی لیڈ حاصل کی۔
کھیل کے دوسرے کوارٹر کے 23 ویں منٹ میں پاکستان کے اعجاز احمد گول کرنے میں کامیاب رہے جبکہ دوسرے کوارٹر کے 30 ویں منٹ میں پاکستان کی جانب سے مبشر علی نے پینلٹی کارنر کے دوران گول اسکور کیا۔
پاکستان کی جانب سے دو مزید گول اسکور کیے گئ ے تاہم ریفری نے انہیں مسترد کردیا جس کے بعد قومی ٹیم نے متعدد بار گیند کو جال میں پھیکنے کی کوشش کی لیکن کامیاب نہ ہوسکی۔
پول اے میں سے جاپان کی ٹیم پہلے ہی 8 پوائنٹس کے ساتھ ٹاپ فور میں جگہ پاچکی ہے، پاکستان کے پوائنٹس کی تعداد 4 ہے جبکہ بھارت کا ایک پوائنٹ ہے، جاپان کے ہاتھوں شکست کی صورت میں آگلے مرحلے میں جانے کا انحصار بھارت اور انڈونیشیا کے میچ پر ہوگا، بھارت کو کم انڈونیشیا کے خلاف کم از کم 16 گولز کے فرق سے جیت درکار ہوگی۔
قومی ٹیم کے اہم کھلاڑی زخمی ہو کر ایونٹ سے باہر
ایشیا کپ میں شریک پاکستانی ہاکی ٹیم کےاہم کھلاڑی ابوبکر ایونٹ سے باہر ہوگئے ہیں، ا ن کی جگہ حنان شاہد کو ٹیم میں شامل کرلیا گیا ہے۔ ابوبکر انڈونیشیا کے خلاف میچ میں گھٹنے کی انجری کا شکار ہوئے تھے۔
سیکرٹری پاکستان ہاکی فیڈریشن نے ابوبکر کے ان فٹ ہونے کو ٹیم کمبی نیشن کے لیے نقصان دہ قرار دیا ہے، ان کا کہنا ہےکہ حنان میں بھی بہت پوٹینشنل ہے، وہ پنالٹی کارنر میں بھی کافی مددگار ثابت ہوسکتےہیں۔
دوسری جانب بھارت اگلے سال جنوری میں میزبان ہونے کے ناطے پہلے ہی ورلڈکپ کھیلنے کا حق رکھتا ہے جبکہ ایشیا سے دوسری تین ٹیمیں کون سی ہوں گی اس کا فیصلہ ایونٹ کے اختتام پر ہوجائے گا۔
واضح رہے کہ قومی ہاکی ٹیم نے اب تک ٹورنامنٹ میں بہترین کاررکردگی مظاہرہ کیا ہے، پاکستان نے انڈونیشیا کو 0-13 جبکہ بھارت کے ساتھ 1-1 سے میچ ڈرا کیا تھا۔

ایشیا ہاکی کپ؛ جاپان نے پاکستان کو 3-2 سے شکست دیدی

2327008-ocket-1653544918-715-640x480-1.jpg

جکارتہ: ایشیا ہاکی کپ میں سنسنی خیز میچ میں جاپان نے پاکستان کو دو کے مقابلے میں تین گول سے ہرادیا۔
انڈونیشیا کے دارالحکومت جکارتہ میں جاری مینز ایشیا ہاکی کپ کے اہم میچ میں جاپان نے پاکستان کے خلاف 14 ویں منٹ میں ریوما اوکا نے فیلڈ گول کرکے ٹیم برتری دلائی، جس کے بعد 15 ویں منٹ میں اکیومی سیگی نے فیلڈ گول اسکور کیا جبکہ 27 ویں منٹ میں جاپان کے تاکوما نیوا نے گول کرکے 3 گولز کی لیڈ حاصل کی۔
کھیل کے دوسرے کوارٹر کے 23 ویں منٹ میں پاکستان کے اعجاز احمد گول کرنے میں کامیاب رہے جبکہ دوسرے کوارٹر کے 30 ویں منٹ میں پاکستان کی جانب سے مبشر علی نے پینلٹی کارنر کے دوران گول اسکور کیا۔
پاکستان کی جانب سے دو مزید گول اسکور کیے گئ ے تاہم ریفری نے انہیں مسترد کردیا جس کے بعد قومی ٹیم نے متعدد بار گیند کو جال میں پھیکنے کی کوشش کی لیکن کامیاب نہ ہوسکی۔
پول اے میں سے جاپان کی ٹیم پہلے ہی 8 پوائنٹس کے ساتھ ٹاپ فور میں جگہ پاچکی ہے، پاکستان کے پوائنٹس کی تعداد 4 ہے جبکہ بھارت کا ایک پوائنٹ ہے، جاپان کے ہاتھوں شکست کی صورت میں آگلے مرحلے میں جانے کا انحصار بھارت اور انڈونیشیا کے میچ پر ہوگا، بھارت کو کم انڈونیشیا کے خلاف کم از کم 16 گولز کے فرق سے جیت درکار ہوگی۔
قومی ٹیم کے اہم کھلاڑی زخمی ہو کر ایونٹ سے باہر
ایشیا کپ میں شریک پاکستانی ہاکی ٹیم کےاہم کھلاڑی ابوبکر ایونٹ سے باہر ہوگئے ہیں، ا ن کی جگہ حنان شاہد کو ٹیم میں شامل کرلیا گیا ہے۔ ابوبکر انڈونیشیا کے خلاف میچ میں گھٹنے کی انجری کا شکار ہوئے تھے۔
سیکرٹری پاکستان ہاکی فیڈریشن نے ابوبکر کے ان فٹ ہونے کو ٹیم کمبی نیشن کے لیے نقصان دہ قرار دیا ہے، ان کا کہنا ہےکہ حنان میں بھی بہت پوٹینشنل ہے، وہ پنالٹی کارنر میں بھی کافی مددگار ثابت ہوسکتےہیں۔
دوسری جانب بھارت اگلے سال جنوری میں میزبان ہونے کے ناطے پہلے ہی ورلڈکپ کھیلنے کا حق رکھتا ہے جبکہ ایشیا سے دوسری تین ٹیمیں کون سی ہوں گی اس کا فیصلہ ایونٹ کے اختتام پر ہوجائے گا۔
واضح رہے کہ قومی ہاکی ٹیم نے اب تک ٹورنامنٹ میں بہترین کاررکردگی مظاہرہ کیا ہے، پاکستان نے انڈونیشیا کو 0-13 جبکہ بھارت کے ساتھ 1-1 سے میچ ڈرا کیا تھا۔

پاکستان کے خلاف کرکٹ، بھارتی سیاسی داؤ پیچ سے آئی سی سی بھی بے بس

2326918-iccwebx-1653512473-903-640x480-1.jpg

لاہور: پاکستان کیخلاف کرکٹ پربھارتی سیاسی داؤ پیچ سے آئی سی سی بھی بے بس ہو گئی۔
بھارت ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے پاکستان کے ساتھ سیریز کھیلنے سے گریزاں ہے، انٹرنیشنل کرکٹ کونسل ویسے تو کھیل میں سیاسی مداخلت کے خلاف باتیں کرتی ہے مگر اس معاملے میں بے بس ہے۔
ویمنز ورلڈکپ 2025کے کوالیفائرز کا درجہ رکھنے والی ون ڈے چیمپئن شپ میں شامل سیریز کی جو تفصیل جاری ہوئی، اس کے مطابق پاکستان اور بھارت کی ٹیمیں دیگر تمام سائیڈز کے مقابل ہوں گی مگر ان کا آپس میں کوئی میچ ہی شیڈول نہیں کیا گیا۔
یاد رہے کہ اس سے قبل دونوں ملکوں کے تعلقات میں سیاسی کشیدگی سے حائل رکاوٹوں کے سبب آئی سی سی مینز ٹیسٹ چیمپئن شپ اور ورلڈکپ سپر لیگ میں بھی روایتی حریفوں کا کوئی مقابلہ نہیں رکھا گیا تھا۔ دونوں ٹیمیں صرف میگا ایونٹس میں ہی مقابل ہوتی ہیں۔
پاکستان ویمنز ٹیم کی ہوم سیریز جنوبی افریقہ، آئرلینڈ، سری لنکا اور ویسٹ انڈیز کیخلاف ہوں گی،بیرون ملک ٹورز میں گرین شرٹس انگلینڈ، نیوزی لینڈ، آسٹریلیا اور بنگلادیش کے مقابل ہوں گی۔
دوسری جانب بھارتی ٹیم اپنے ملک میں نیوزی لینڈ، جنوبی افریقہ، آئرلینڈ اور ویسٹ انڈیزکی میزبانی کرے گی،اوے سیریز انگلینڈ، آسٹریلیا، بنگلادیش اور سری لنکا کے ساتھ شیڈول ہیں،چیمپئن شپ میں شرکت کرنے والی ٹیموں میں بنگلادیش اور آئرلینڈ کو بھی شامل کرکے تعداد 8سے بڑھا کر 10کردی گئی۔
اس سے قبل آسٹریلیا، انگلینڈ، بھارت، نیوزی لینڈ، پاکستان، جنوبی افریقہ، سری لنکا اور ویسٹ انڈیز کی سائیڈز موجود تھیں، نئی 3سالہ سرکل میں ہر ٹیم کو3ون ڈے میچز پر مشتمل 8سیریز کھیلنا ہوں گی، ان میں سے 4ہوم اور 4اوے ہوں گی۔
یہ مقابلے مکمل ہونے پر 5ٹاپ ٹیموں اور میزبان سائیڈ کو براہ راست ورلڈکپ کیلیے ٹکٹ مل جائے گی جبکہ باقی 4 کوالیفائرز میں شرکت کریں گی جہاں 11 اور 12نمبر کی ٹیمیں بھی ان سے مقابلے کیلیے موجود ہوں گی، ان 6ٹیموں میں سے ٹاپ 2کو میگا ایونٹ کا حصہ بننے کا موقع مل جائے گا۔
آئی سی سی چیمپئن شپ کے نئے سرکل کا آغاز یکم جون کو پاکستان اور سری لنکا کے مابین کراچی میں ون ڈے میچ سے ہوگا، سری لنکن ٹیم ان دنوں ٹی ٹوئنٹی سیریز کھیل رہی ہے،جنوبی افریقہ اور آئرلینڈ 11جون سے مقابل ہوں گے۔
دریں اثناء آئی سی سی نے بنگلادیش اور آئرلینڈ کو چیمپئن شپ میں نویں اور دسویں ٹیم کے طور شامل کرنے کے ساتھ نیدرلینڈ، پاپوانیوگنی، اسکاٹ لینڈ، تھائی لینڈ اور امریکا کو بھی ون ڈے اسٹیٹس دے دیا۔
چیف ایگزیکٹو جیف ایلر ڈائس کا کہنا ہے کہ چیمپئن شپ اور ون ڈے اسٹیٹس کی حامل ٹیموں کی تعداد میں اضافے سے ویمن کرکٹ کے فروغ کا عمل تیز کرنے میں مدد ملے گی، زیادہ ملکوں کے مابین باقاعدگی سے میچز مقابلے کی فضا پیدا کریں گے۔
ورلڈکپ کی فاتح آسٹریلوی کپتان میگ لیننگ کا کہنا ہے کہ نیوزی لینڈ میں کھیلے جانے والے میگا ایونٹ میں کئی ٹیمیں ابھرتی ہوئی نظر آئیں، اگلے سرکل میں بھی مسابقت کی اس فضا کو برقرار رکھنے سے کھیل کو مزید عروج حاصل ہوگا، بنگلادیش اور آئرلینڈ کو تسلسل کے ساتھ بڑی ٹیموں کے ساتھ کھیلنے کے مواقع ملیں گے تو ان کی کارکردگی میں بہتری کے مواقع بھی پیدا ہوں گے۔

انگلش کپتان ہیتھر نائٹ نے کہا کہ چند ٹیموں میں شاندار ٹیلنٹ یہ نشاندہی کرتا ہے کہ مستقبل میں کھیل کے مزید فروغ اور آئی سی سی چیمپئن شپ میں بھی ٹیموں کے اضافے کی توقع ہوسکتی ہے۔

گلگت جی بی پی ڈبلیو ڈی پولو اے ٹیم نے تاریخ رقم کر دی

03668a47-8db2-42d9-8847-f1861f935816.jpg

گلگت (سپورٹس رپورٹر سے) گلگت جی بی پی ڈبلیو ڈی پولو اے ٹیم نے تاریخ رقم کر تے ہو ئے 20سالوں بعد جشن بہاراں پولو ایونٹ کے کوارٹر فائنل میچ میں جی بی پولیس اے ٹیم کو 4 کے مقابلے میں 9 گولوں سے شکست دیگر سیمی فائنل کے لئے کوالیفائی کر لیا ہے شاہی پولو گراونڈ میں کھیلے گئے میچ کو دیکھنے کے لیے شائقین پولو کی بڑی تعداد نے پولو گراونڈ کا رخ کر لیا اور اس میچ کو تاریخی قرار دیتے ہوئے جی بی پی ڈبلیو ڈی اے پولو ٹیم کی حوصلہ افزائی کی جی بی پی ڈبلیو ڈی اے پولو ٹیم اپنا اگلہ میچ یعنی سیمی فائنل این ایل آئی اے پولو ٹیم کے خلاف کھیلی گی شاہی پولو گراونڈ گلگت میں کھیلے گئے میچ کے مہمان خصوصی چیف انجینئر گلگت ریجن بشارت اللہ خان تھے جنہوں نے جی بی پی ڈبلیو ڈی کی پولو ٹیم کو بہترین کھیل پیش کرنے پر داد دی اس موقع پر ونر پولو ٹیم کے کھلاڑیوں نے مہمان خصوصی کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ اسی طرح محکمہ پی ڈبلیو ڈی کے اعلیٰ حکام کی سرپرستی حاصل رہی تو جی بی پی ڈبلیو ڈی کی پولو ٹیم کا شمار جی بی کے بہترین پولو ٹیموں میں ہوگا

ایشیا ہاکی کپ، پریکٹس میچ میں پاکستان نےعمان کو ہرادیا

pakistanhockeyteam.jpg

جکارتہ: ایشیا ہاکی کپ کے لیے جکارتہ میں موجود پاکستانی ہاکی ٹیم نے دوسرے پریکٹس میچ میں عمان کو ایک گول سے ہرادیا۔
پاکستان کی طرف سے واحد گول پنالٹی کارنر پر تیسرے کوارٹر میں رضوان علی نے کیا، پہلے پریکٹس میچ میں کوریا نے پاکستان کو دو کےمقابلے میں ایک گول سے ہرایا تھا۔
واضح رہے کہ ایشیا کپ کا اغاز پیر سے ہورہا ہے، ابتداائی روز پاکستان کا مقابلہ روایتی حریف بھارت سے ہوگا، پاکستان گروپ اے میں شامل ہے جس میں بھارت اور جاپان سمیت انڈونیشیا کو بھی ہرانے کا چیلنج درپیش ہوگا، ایشیا کپ کی تین بہترین ٹیمیں ورلڈ کپ کے لیے کوالیفائی کریں گے۔
میزبان کے طور پر بھارت پہلے ہی ورلڈکپ کھیلنے کا اہل ہے، ایشیا کپ کی دوسری تین ٹیمیں اب اپنی جگہ بنانے کی کوشش کریں گے۔

پاکستانی ٹیم اچھی ہے لیکن اسے شکست دینے کی صلاحیت رکھتے ہیں، چماری اتاپتو

maxresdefault.jpg

کراچی: پاکستان کا دورہ کرنے والی سری لنکن ویمن کرکٹ ٹیم کی کپتان چماری اتاپتو نے کہا ہے کہ پاکستان آکر بہت خوشی ہوئی، سیریز میں دلچسپ اور بہترین کرکٹ دیکھنے کو ملے گی۔
رپورٹ کے مطابق کراچی میں پریکٹس سیشن کے بعد ساؤتھ اینڈ کلب، ڈی ایچ اے میں منعقد کی گئی پریس کانفرنس سے بات کرتے ہوئےپاکستان کا دورہ کرنے والی سری لنکن ویمن کرکٹ ٹیم کی کپتان چماری اتاپتو نے کہا ہے کہ پاکستان آکر بہت اچھا لگ رہا ہے ،میں ذاتی طور پر پہلی بار پاکستان آئی ہوں یہاں بہترین سہولیات فراہم کی جا رہی ہیں ۔
میڈیا سے بات کرتے ہوئے سری لنکا کی کپتان نے کہا کہ پاکستان کو ہوم کنڈیشنز کا فائدہ ہوگا،ہماری ایک کھلاڑی کورونا میں مبتلا ہونے کے باعث ٹیم کے ہمراہ پاکستان نہیں اسکی،سری لنکا کے حالات بہتر ہونے کے خواہاں ہیں۔
ان کا کہنا تھا کہ یہاں کا موسم گرم ہے،لیکن ہماری کھلاڑی سیریز کےلیے پرامید ہونے کے ساتھ پرجوش اور پرعزم ہیں ،دونوں ممالک کے درمیان دوستی کا رشتہ ہے،سیریز میں اچھی کرکٹ دیکھنے کو ملے گی،ہماری ٹیم میں زیادہ تر نوجوان کھلاڑی شامل ہیں جن پر ہمارا انحصارہوگا۔
پاکستانی ٹیم کے بارے میں اظہارِ خیال کرتے ہوئے سری کنکا کی کپتان کا کہنا تھا کہ پاکستان کی ٹیم میں تجربہ کار کھلاڑی ہیں،ٹی ٹونٹی مقابلوں میں پاکستان سخت حریف ثابت ہوگا۔
دونوں ممالک کے درمیان دوستانہ تعلقات پر روشنی ڈالتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ پاکستان اور سری نکا کے درمیان اچھے دوستانہ تعلقات قائم ہیں ،ہمارے پاس سینیئرزاور جونیئرزکا اچھا کامبی نیشن ہے،یہ ایک اہم دورہ ہے، ہم کافی وقت سے انٹرنیشنل کرکٹ سے دور اور ون ڈے میچز نہیں کھیل رہے،۔
سری نکا کی موجودہ صورتحال پر اظہار ِ خیال کرنے سے انکار کرتے ہوئےچماری اتاپتو نے کہا امید ہے کہ ہماری قوم بحران سے نکل آئے گی اور آنے والے وقت میں ہمارے ملک کے حالات ٹھیک ہوجائیں گے، اس پر مزید بات نہیں کرسکتی۔
سیریز میں پاکستان پر برتری حاصل کرنے کے لئے پُرعزم دکھائی دینے والی سری لنکن کپتان نے کہا کہ پاکستان کی ٹیم اچھی ہے لیکن ہم اسے شکست دینے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔
واضح رہے کہ پاکستان اور سری لنکن ویمن کرکٹ ٹیمز کے درمیان پہلا ٹی ٹوئنٹی میچ 24، دوسرا 26 جبکہ تیسرا 28 مئی کو کھیلا جائے گا۔

بابر اعظم کے بھائی کی ایچ پی سی میں پریکٹس موضوع بحث

babarazampractice.jpg

لاہور: بابر اعظم کے بھائی کی نیشنل ہائی پرفارمنس سینٹر(ایچ پی سی) میں پریکٹس موضوع بحث بن گئی۔
نیشنل ہائی ہائی پرفارمنس سینٹر میں صرف قومی اور فرسٹ کلاس کرکٹرز کو ہی پریکٹس کی اجازت ہوتی ہے، رشتہ داروں اور دوستوں کو ساتھ نہیں لایا جاسکتا، سفیر اعظم نے بھائی بابر اعظم کی رہنمائی میں یہاں بیٹنگ پریکٹس کی۔
انھوں نے جب سوشل میڈیا پر ویڈیو شیئر کی تو سخت تنقید کا سلسلہ شروع ہو گیا، اس فوٹیج میں تینوں فارمیٹ میں قومی ٹیم کے کپتان اچھے اسٹروکس پر بھائی کی حوصلہ افزائی کرتے نظر آتے ہیں، کوئی پروفیشنل کیریئر نہ ہونے کے باوجود ان کی سرگرمی مناسب نہیں تھی۔
پی سی بی ذرائع کے مطابق بابر اعظم اور ان کے بھائی کنڈیشننگ کیمپ سے قبل نیشنل ہائی پرفارمنس سینٹر آئے تھے، واقعہ کا علم ہونے کے بعد اس کا نوٹس بھی لیا گیا۔ کپتان کو یاد دہانی کرائی گئی کہ پالیسی کے مطابق ایسا کرنا مناسب نہیں، انھوں نے اتفاق بھی کیا اور مستقبل میں محتاط رہنے کا یقین دلا دیا۔
یاد رہے کہ آف سیزن میں بھی قومی کرکٹرز نیشنل ہائی پرفارمنس میں جم سمیت ٹریننگ کی سہولیات کا فائدہ اٹھانے کیلیے آتے ہیں،عمارت کے عقب میں گراؤنڈ میں نیٹس بھی موجود ہیں، جہاں کوچز کی رہنمائی میں کھلاڑیوں کی تنکنیکی خامیاں دور کرنے پر کام ہوتا ہے،آف سیزن میں یہاں اسٹار کرکٹرز بھی ٹریننگ کرنے کیلیے آتے ہیں، اگر کسی کھلاڑی کو کسی تکنیکی کا سامنا کرنا پڑے تو وہ بھی کوچز سے رہنمائی کیلیے ایچ پی سی آ جاتا ہے۔

پی سی بی کا ڈویژنل سطح پرکرکٹ متعارف کرانے کا فیصلہ

cricket.jpg

لاہور: پاکستان کرکٹ بورڈ(پی سی بی) نے ڈویژنل سطح پرکرکٹ متعارف کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔
کرکٹ کے فروغ کے لئے پی سی بی نے ڈویژنل سطح پرکرکٹ متعارف کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔ پی سی بی اور6 کرکٹ ایسوسی ایشنز کے چیف ایگزیکٹوز کے 2 روزہ اجلاس میں کرکٹ کوڈویژنل سطح پرمتعارف کرانے اورسٹی اورکرکٹ ایسوسی ایشنز کے انڈر 19 اورسینئرکرکٹرز کو مزید مواقع دینے کا فیصلہ کیا گیا۔
فرسٹ اور سیکنڈ الیون کھلاڑی اپنی فارم کی بحالی کے لیے ان ڈویژنل ٹورنامنٹس میں شرکت کرسکیں گے۔ یہ ٹورنامنٹ سٹی کرکٹ ایسوسی ایشنز اور کرکٹ ایسوسی ایشنز کی بنیاد پر کھیلے جائیں گے۔ہر کرکٹ ایسوسی ایشن کو4 ڈویژنل ٹیمیں بنانے کی اجازت ہوگی۔ سینئر ڈویژنل ٹیمیں ڈبل راؤنڈ رابن کی بنیاد پر کھیلے جانے والے3 روزہ ٹورنامنٹ میں شرکت کریں گی۔
اجلاس میں کلب کرکٹ ڈھانچے کو بھی 3 حصوں میں تقسیم کرنے پر اتفاق کیاگیا ہے۔ گزشتہ سیزن میں کارکردگی کو پیش نظر رکھتے ہوئے تمام کرکٹ کلبز کو ترقی اور تنزلی کی بنیاد پر تین حصوں میں تقسیم کیا گیا ہے۔ ہر کلب کو ونٹر اور سمر لیگز میں کم از کم 7میچز کھیلنے کا موقع دیا جائے گا۔
ڈائریکٹر ہائی پرفارمنس سینٹر پی سی بی ندیم خان کا کہنا ہے کہ اوپن ٹرائلز کے نظام کو ختم کرنے کا ارادہ ہے کیونکہ کسی بھی کھلاڑی کے لئے اپنی صلاحیتوں کے اظہارکے لئے چند اوورز یا میچز ناکافی ہیں۔کھلاڑیوں کی مکمل صلاحیتیں جانچنے کے لئے منظم اورمناسب ڈھانچا ہونا چاہئیے جہاں انہیں اپنی مہارت نکھارنے اورفٹنس میں بہتری لانے کے لئے مطلوبہ وسائل فراہم کیے جائیں۔

محمد یوسف ٹاپ سے لوئر آرڈر تک ٹیم کی بیٹنگ مستحکم کرنے کے خواہاں

yousuf.jpg

لاہور: قومی کرکٹ ٹیم کے بیٹنگ کوچ محمد یوسف ٹاپ سے لوئر آرڈر تک ٹیم کی بیٹنگ کو مستحکم کرنے کے خواہاں ہیں۔
ذرائع کے مطابق محمد یوسف نے لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کھلاڑیوں کی کارکردگی کو بہتر کرنے کیلئے کنڈیشننگ کیمپ لگایا گیا ہے، کرکٹرز کو پورا سال اس طرح ٹریننگ کا موقع نہیں ملتا، ماضی میں بھی کھلاڑیوں پر مشکل وقت آتا رہا ہے، فواد عالم بھی ٹیسٹ سیریز میں پرفارم نہیں کرسکے، ون ڈے میچز میں ٹاپ آرڈر نے بہترین پرفارم کیا۔
ان کا کہنا تھا کہ ٹیم ون ڈے میچز میں ریکارڈ ہدف کا تعاقب کرنے میں کامیاب ہوئی، جب تمام کھلاڑی اپنے نمبر پر پرفارم کریں گے تب ہی ٹیم کی کارکردگی میں بہتری اور تسلسل آئے گا، ٹاپ اور مڈل کے ساتھ لوئر آرڈر پر بھی توجہ دے رہے ہیں۔
کوچ نے کہا کہ ہماری کوشش ہے اس کیمپ میں بیٹرز کو زیادہ مواقع فراہم کریں، کھلاڑیوں کی فٹنس پر بھی کام کیا جارہا ہے، فٹنس اچھی ہوگی تو گرم موسم سے کوئی فرق نہیں پڑے گا، اسد شفیق نے فرسٹ کلاس میں تسلی بخش کارکردگی نہیں دکھائی، کم بیک کرنے کے لیے آپ کو اچھی کرکٹ کھیلنی پڑتی ہے، بابر اعظم ورلڈ کلاس کھلاڑی ہیں اور دن بدن ان کی کارکردگی میں بہتری آرہی ہے۔
محمد یوسف کا مزید کہنا تھا کہ جس طرح کاؤنٹی میں شان مسعود کھیل رہے ہیں آج تک کوئی پاکستانی ایسا نہیں کھیلا، سلیکٹرز بھی یہ کارکردگی دیکھ رہے ہوں گے، ٹیسٹ سکواڈ میں تو وہ پہلے ہی موجود ہیں، ون ڈے کرکٹ میں دیکھنا ہوگا کہ ان کی کہاں جگہ بنتی ہے، ماضی کی کرکٹ اور آج کی کرکٹ میں کافی فرق ہے، عابد علی کے ساتھ پہلے کافی کام کیا ہے، میرے خیال سے جس طرح عابد علی ٹریننگ کررہا ہے ویسے ٹیم میں واپس آئے گا۔

Top