طالبان حکومت کی بھارت کو کابل میں سفارتخانہ دوبارہ کھولنے کی پیشکش

2327133-talibanmeetchinaspecialrepx-1653554315-974-640x480-1.jpg

کابل: طالبان حکومت نے بھارت کو کابل میں دوبارہ سفارتخانہ کھولنے کی پیشکش کردی۔
افغان میڈیا کے مطابق قطرمیں طالبان کے سیاسی دفترکے ترجمان سہیل شاہین نے ایک انٹرویو میں کہا کہ بھارت کابل میں دوبارہ سفارتخانے کھولے گا تو اس کے سفارتکاروں کومکمل سیکورٹی فراہم کی جائے گی۔ بھارت کوقومی اورباہمی مفادات کے بنیاد پرطالبان حکومت سے تعلقات قائم کرنا چاہئیں اورسابق افغان حکام سے روابط نہیں رکھنے چاہئیں۔
سہیل شاہین کا کہنا تھا کہ افغانستان میں کام کرنے والے تمام غیرملکی سفارتکاروں کو مکمل تحفظ فراہم کرنا حکومت کی ذمہ داری ہے۔بہت سے سفارت خانے کابل میں کام کررہے ہیں اورانہیں بھرپورسیکورٹی دی گئی ہے۔بھارتی سفارت خانے اورسفارتکاروں کوبھی سیکورٹی فراہم کی جائے گی۔
سہیل شاہین نے کہا کہ اگربھارت افغانستان میں جاری منصوبے مکمل کرنا چاہے گا یا نئے منصوبے شروع کرنا چاہے گا تو اس کا خیرمقدم کریں گے۔

داعش کا سربراہ ترکی میں گرفتار

2327272-untitledcopy-1653574643-452-640x480-1.jpg

انقرہ: ترک سیکورٹی فورسز نے استنبول میں ایک چھاپے کے دوران دہشتگرد تنظیم داعش کے سربراہ کو گرفتار کرلیا ہے۔
ترک میڈیا کے مطابق سینیئر حکام نے بلومبرگ کو بتایا کہ انسداد دہشت گردی کے افسران اور انٹیلی جنس نے ابو حسن الہاشمی القریشی کو گرفتار کیا ہے۔
سیکورٹی حکام نے بتایا کہ ابو حسن کو ایک گھر کی طویل نگرانی کے بعد پکڑا گیا جس میں وہ مقیم تھا۔ تاہم حکام نے مزید تفصیلات سے آگاہ نہیں کیا ہے۔
واضح رہے کہ ابو حسن الہاشمی داعش کے پہلے لیڈر ابوبکر البغدادی کا بھائی ہے، جس نے 2014 میں موصل میں نام نہاد ’خلافت‘ کا اعلان کیا تھا۔
رواں سال فروری میں شام میں امریکی آپریشن کے دوران سابق سربراہ ابو ابراہیم القریشی کی ہلاکت کے بعد ابو حسن الہاشمی القریشی، جس کا اصل نام جمعہ عواد البدری ہے، نے داعش کی قیادت سنبھالی تھی۔

بھارت کی ریاستی دہشتگردی،3 کشمیری نوجوان شہید

2327070-indianheldkashmirxx-1653545714-775-640x480-1.jpg

سرینگر: مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی فورسز کی ریاستی دہشتگردی میں 3 کشمیری نوجوان شہید ہوگئے۔
کشمیری میڈیا کے مطابق بھارتی فورسزنے مقبوضہ کشمیرکے علاقے کپواڑہ میں فائرنگ کرکے 3کشمیری نوجوانوں کوشہید کردیا۔ نوجوانوں کونام نہاد سیکورٹی آپریشن کی آڑ میں قتل کیا گیا۔
قابض بھارتی فوجیوں نے کپواڑہ کا محاصرہ کرلیا اورگھرگھرتلاشی کے دوران متعدد افراد کوگرفتارکرلیا۔ علاقے میں موبائل اورانٹرنیٹ سروس بھی بند ہے۔
دوسری جانب مختلف علاقوں میں حریت رہنما یاسین ملک کی سزا کے خلاف مظاہرہ کرنے والے سیکڑوں مظاہرین کوبدترین تشدد کا نشانہ بنایا گا۔متعدد مظاہرین کو بھارت کے خلاف نعرے لگانے پرگرفتارکرلیا گیا۔
بھارت کی قابض فورسز 2 دن میں 6 کشمیری نوجوانوں کو شہید کرچکی ہیں۔

سعودی عرب نے ٹیکسی ڈرائیوروں کیلئے یونیفارم کی منظوری دیدی

2327121-mobileapp-1653552644-337-640x480-1.jpg

ریاض: سعودی عرب کی پبلک ٹرانسپورٹ اتھارٹی نے موبائل ایپ ٹیکسی سروس سمیت عام ڈرائیوروں کیلئے یونیفارم کی منظوری دیدی۔
غیر ملکی خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق سعودی پبلک ٹرانسپورٹ اتھارٹی نے بیان میں کہا کہ ٹیکسی اور ایپلی کیشن ٹیکسی سروس کو جدید بنانے کیے لیے متعدد تبدیلیاں لائی جارہی ہیں جبکہ پالیسی پر 12 جولائی 2022 سے عملدرآمد شروع ہوجائے گا۔
حکام نے بتایا کہ ٹیکسیوں کے لیے نئی گاڑیاں استعمال ہوں گی اور پرانی گاڑیوں پر پابندی لگائی جائے گی جبکہ ڈرائیوروں کے یونیفارم سے ٹرانسپورٹ سروس کا معیار بلند ہوگا۔
پبلک ٹرانسپورٹ اتھارٹی نے ایپلی کیشن اور ٹیکسی ڈرائیوروں کو متوجہ کرتے ہوئے کہا کہ وہ نئی وردی کی تفصیلات معلوم کرنے کے لیے اتھارٹی کی ویب سائٹ سے رجوع کریں۔

کرناٹک یونیورسٹی میں ہندوطلبا کا حجاب کے خلاف دھرنا

2327094-indiaupdated-1653553799-181-640x480-1.jpg

نئی دہلی: بھارتی ریاست کرناٹک کی یونیورسٹی میں ہندوطلبا نے حجاب کے خلاف احتجاج کیا اوردھرنا دیا۔
بھارت میں حجاب کے خلاف مہم میں شدت آگئی ہے۔ ریاست کرناٹک کے شہرمنگلورو میں یونیورسٹی کے ہندو طلبا نے حجاب کے خلاف مظاہرہ کیا اوردھرنا دیا۔ ہندو طلبا نے کلاس روم میں حجاب پہن کرآنے پرپابندی لگانے کا مطالبہ کیا۔
ہندو طلبا نے دھمکی دی کہ باحجاب طالبات کو کلاس میں بیٹھنے نہیں دیا جائے گا۔ یونیورسٹی کی جانبدار اورمسلمان دشمن انتظامیہ نے ہندوطلبا کے خلاف یونیورسٹی کی حدود میں مظاہرہ کرنے پر کوئی کارروائی نہیں کی۔ کرناٹک میں اسکولز اورکالجز میں حجاب کرکے آںے پرپابندی عائد ہے اورمسلمان طالبات نے حجاب پرپابندی کے خلاف عدالت سے رجوع کررکھا ہے۔

ایران میں رہائشی عمارت گرنے سے 11 ہلاکتوں پر میئر سمیت 10 میونسپل حکام گرفتار

2326340-iranbuilding-1653402590-862-640x480-1.jpg

تہران: ایران میں ایک کثیرالمنزلہ رہائشی عمارت گرنے سے 11 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے جس پر میئر سمیت 11 میونسپل اہلکاروں کو گرفتار کرلیا گیا۔
عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق ایران کے شہر آبدان میں 10 منزلہ رہائشی عمارت گرگئی تھی جس کے ملبے تلے دب کر 11 افراد ہلاک اور 20 کے قریب زخمی ہوگئے تھے جب کہ 30 افراد کو بحفاظت نکال لیا گیا تھا۔
رہائشی عمارت کے انہدام پر عدالت کی جانب سے فوری طور پر بنائی گئی انکوائری کمیٹی کی سفارش پر شہر کے موجودہ میئر سمیت 11 میونسپل حکام کو حراست میں لے لیا گیا جب کہ سابق میئر کی گرفتاری بھی عمل میں لائی گئی ہے۔
ملزمان کو کل عدالت میں پیش کیا جائے گا جہاں ان پر فرد جرم عائد کی جائے گی اور غفلت و لاپرواہی کے باعث انسانی جانوں کو خطرے میں ڈالنے کی دفعات کے تحت مقدمہ چلایا جائے گا۔

میکسیکو؛ ہوٹل میں مسلح افراد کی فائرنگ، 11 ہلاک

2326313-attack-1653399899-443-640x480-1.jpg

میکسیکو سٹی: لاطینی امریکا کے ملک میں مسلح افراد نے ہوٹل میں گھس کر فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں کم از کم 11 افراد ہلاک جبکہ پانچ افراد زخمی ہوگئے۔
غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق میکسیکو کی ریاست گوانجواٹو کے شہر سیلایا کے ایک ہوٹل میں 15 کے قریب افراد گُھسے اور اندھا دھند فائرنگ شروع کردی۔
پیر کے شب پیش آنے والے فائرنگ کے افسوس ناک واقعے کے نتیجے میں 11 ہلاکتوں اور 5 افراد کے زخمی ہونے کی تصدیق کی گئی ہے۔
حکام کے مطابق یہ قتل عام مقامی وقت کے مطابق رات 10 بجے شروع ہوا اور ہوٹل میں موجود مہمانوں اور ملازمین پر 50 سے زائد گولیاں چلائیں۔
مقامی حکام نے بتایا کہ فائرنگ کی جگہ سے قریب موجود دکانیں بھی جل گئیں اور مبینہ طور خود ساختہ بموں سے ان کو نقصان بھی پہنچا۔
جب ایجنسیاں ہوٹل میں داخل ہوئیں تو انہیں چار لوگوں کی لاشیں ملیں اور مزید چھان بین کرنے پر انہیں مزید چھ افراد کی لاشیں ملیں۔
مقامیوں نے پیر کی شب ہونے والے قتل عام میں کم از کم 30 دھماکوں کی آوازوں کی تصدیق کی۔
اطراف کے رہائیشیوں نے بتایا کہ ہوٹل کے باہر کی جانب مبینہ طور پر ایک کارڈ بورڈ آویزاں تھا جس پر درج پیغام مبینہ طور پر منظم مجرمانہ گروہوں سے منسوب تھا۔
سیلایا کی شہری سیکیورٹی کے سیکریٹری اِگناشیو رِیورا واقعے کے بعد جائے وقوع پر پہنچے جہاں وہ دیگر افسران کے ساتھ ابتدائی تحقیقات میں شامل ہوگئے۔

کورونا کا دنیا سے ابھی یقینی اور مکمل خاتمہ نہیں ہوا، عالمی ادارہ صحت

2326309-whodirector-1653399591-768-640x480-1.jpg

جنیوا: عالمی ادارہ صحت کے سربراہ ٹیڈروس ایڈہانوم نے خبردار کیا ہے کہ فی الحال کورونا وائرس کا یقینی اور مکمل خاتمہ نہیں ہوا ہے اس لیے احتیاط لازم ہے۔
عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق ڈبلیو ایچ او کے سربراہ ٹیڈروس ایڈہانوم نے کہا ہے کہ کورونا وائرس نے ہر موڑ پر ہمیں حیران کیا ہے اس لیے تاحال مہلک وائرس سے متعلق کسی قسم کی پیشن گوئی کرنے کے قابل نہیں ہوسکے ہیں۔
عالمی ادارہ صحت کے سربراہ نے خبردار کیا کہ اس وقت بھی دنیا بھر میں تقریباً 70 ممالک میں کورونا کیسز میں اضافہ ہو رہا ہے۔ یہ مہلک وائرس ابھی مکمل طور پر ختم نہیں ہوا۔ اب تک صرف 57 ممالک نے 70 فیصد آبادی کی ویکسینیشن مکمل کی ہے۔
ٹیڈروس ایڈہانوم نے مزید کہا کہ کورونا وبا جادوئی طور پر خود بخودختم نہیں ہوگی، اس کے لیے ضروری ہے کہ تمام ممالک اپنی 70 فیصد آبادی کی ویکسینیشن کو یقینی بنائیں بالخصوص ہیلتھ ورکرز، کمزور قوت مدافعت، اور 60 سال سے زائد عمر کے افراد کی ویکسینیشن لازمی کی جائے۔

سابق برطانوی رکن اسمبلی عمران خان کو جنسی استحصال پر قید کی سزا

2326183-ukmpimrankhanjailedformonthinminorsexualassaultcase-1653385490-159-640x480-1.jpg

لندن: برطانوی رکن اسمبلی عمران احمد خان کو نو عمر لڑکے سے جنسی استحصال کے کیس میں 18 ماہ کی قید سنائی گئی ہے۔
عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق جنوری 2008 میں 15 سالہ لڑکے کو جنسی استحصال کا نشانہ بنانے پر برطانوی رکن اسمبلی عمران احمد خان کے خلاف مقدمے کی سماعت ہوئی۔
عدالت نے شواہد، جنسی استحصال کے شکار لڑکے اور ملزم کے اعترافی بیان کی روشنی میں 48 سالہ رکن اسمبلی کو مجرم قرار دیتے ہوئے 18 ماہ قید کی سزا سنائی ہے۔ جنسی استحصال کے شکار لڑکے کی عمر اب 29 برس ہے۔
برطانوی رکن اسمبلی عمران خان جنسی زیادتی کے شکار بچوں کی ذہنی اور نفسیاتی بحالی سے متعلق کمیٹی کے رکن بھی تھے تاہم لڑکے کے ساتھ جنسی استحصال کا معاملہ سامنے آنے پر اپریل 2022 میں رکنیت سے استعفیٰ دیدیا تھا۔
رکن اسمبلی عمران خان پر جون 2019 میں فرد جرم عائد کردی گئی تھی جس پر حکمراں جماعت نے رکن اسمبلی کی بطور چیف وہپ کی حیثیت ختم کردی تھی۔

اسرائیل کا دمشق پر راکٹ حملہ، 3 فوجی اہلکار جاں بحق

untitledcopy-5.jpg

دمشق: شام کے دارالحکومت دمشق کے جنوبی علاقوں میں “اسرائیلی راکٹ حملے میں 3 فوجی اہلکار جاں بحق اور 4 زخمی ہو گئے ہیں۔
شام کے سرکاری صنعا نیوز ایجنسی نے فوجی ذرائع کے حوالے سے بتایا گیا کہ راکٹ حملہ جمعے کی رات ہوا اور اسے گولان کی پہاڑیوں سے لانچ کیا گیا جس کے نتیجے میں تین اہلکار جاں بحق، 4 زخمی اور مادی نقصان بھی ہوا۔
فوجی ذرائع نے یہ بھی بتایا کہ ہمارے فضائی دفاع نے اسرائیلی راکٹوں کا مقابلہ کیا اور ان میں سے بیشتر کو مار گرانے میں کامیاب ہوئے۔
دوسری جانب سیریئن آبزرویٹری فار ہیومن رائٹس کا کہنا ہے کہ حملے میں ایرانی ملیشیا کے فوجی ٹھکانوں کو نشانہ بنایا گیا۔ آبزرویٹری نے بتایا کہ حملے میں جاں بحق ہونے والے شامی فضائی دفاع کے تین شامی اہلکار ہیں جبکہ چار دیگر زخمی ہوئے ہیں۔
واضح رہے کہ شامی علاقوں پر یہ حملہ رواں سال کا 13 واں اسرائیلی حملہ ہے۔ اس سے قبل 13 مئی کو اسرائیل نے میزائل حملہ کیا تھاجس میں وسطی شام میں پانچ افراد جاں بحق ہوئے تھے جبکہ دوسرا حملہ 27 اپریل کو دمشق کے قریب کیا گیا جس میں چھ شامی فوجیوں سمیت 10 افراد ہلاک ہوئے تھے۔

Top