حالیہ بارشوں سے ملک بھر میں 552 افراد جاں بحق ہوئے، این ڈی ایم اے

123-42.jpg

اسلام آباد(ویب ڈیسک) ملک بھر میں حالیہ بارشوں کے نتیجے میں 552 افراد جاں بحق اور 628 زخمی ہوئے، تقریباً 50 ہزار مکانات کو نقصان پہنچا۔ این ڈی ایم اے نے بارشوں کے نتیجے میں جانی اور مالی نقصان کی تفصیل جاری کر دی جس میں بتایا گیا ہے کہ پچھلے 24 گھنٹوں کے دوران سیلاب اور بارشوں کے باعث مختلف واقعات میں تین اموات رپورٹ ہوئیں جب کہ ملک بھر میں سیلاب، بارشوں کے سبب اموات کی کل تعداد 552 اور زخمیوں کی تعداد 628 ہوگئی ہے۔
نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (این ڈی ایم اے) کی ابتدائی رپورٹ کے مطابق سیلاب اور بارشوں کے باعث 49778 مکانات کو نقصان پہنچا، ملک بھر میں سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں امدادی سرگرمیاں جاری ہیں، وزیر اعظم نے ریلیف سرگرمیوں کی نگرانی کے لیے اعلیٰ سطح کمیٹی تشکیل دے دی۔
سرکاری اعلامیے کے مطابق وزیر اعظم کی ہدایت پر سیلاب متاثرین کے لیے فی کس 10 لاکھ کے امدادی چیک کی ترسیل جاری ہے، این ڈی ایم اے نے لسبیلہ کے لیے مزید امدادی سامان روانہ کردیا ہے، امدادی سامان میں خیمے، ترپالیں اور جنریٹرز شامل ہیں، فلاحی تنظیموں کی جانب سے لسبیلہ اور کوئٹہ کے متاثرین کو راشن کی فراہمی جاری ہے۔

ممنوعہ فنڈنگ تحقیقات؛ ایف آئی اے نے اسد قیصراورعمران اسماعیل سمیت دیگر کو طلب کرلیا

123-41.jpg

اسلام آباد(ویب ڈیسک)وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) نے تحریک انصاف کے خلاف ممنوعہ فارن فنڈنگ کیس میں سابق اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر اور سینئر پی ٹی آئی رہنما محمود الرشید، سابق گورنر سندھ عمران اسماعیل اور پی ٹی آئی کی خاتون رہنما ڈاکٹر سیما ضیا کو تفتیش کے لیے طلب کر لیا۔
ذرائع کے مطابق سابق اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر اور محمود الرشید کو اگلے ہفتے 11 اگست کو طلب کیا گیا ہے۔
ایف آئی اے اکنامک کرائم ونگ نے پی ٹی آئی ممنوعہ فارن فنڈنگ معاملے کی تحقیقات کا آغاز کردیا۔ تحقیقاتی ٹیموں کی رہنمائی و کوآرڈینیشن کے لیے ایڈیشنل ڈائریکٹر ٹریننگ ڈاکٹر انعام وحید کی سربراہی میں 5 رکنی اسپیشل مانیٹرنگ ٹیم بھی تشکیل دے دی گئی ہے۔ایف آئی اے نے کراچی میں بھی ممنوعہ فنڈنگ کیس کی تحقیقات کے لیے پانچ رکنی کمیٹی قائم کردی، جس کی سربراہی ڈپٹی ڈائریکٹر کمرشل بینک سرکل رابعہ قریشی کو دی گئی ہے۔
ایف آئی اے نے پی ٹی آئی کی رہنما ڈاکٹر سیما ضیا اور سابق گورنر سندھ عمران اسماعیل کو بھی ممنوعہ فنڈنگ کیس کی تحقیقات کے لیے طلب کرلیا ہے۔
الیکشن کمیشن آف پاکستان کے 3 رکنی بینچ نے پی ٹی آئی ممنوعہ فنڈنگ کیس کے فیصلے میں کہا ہے کہ تحریک انصاف پر ممنوعہ فنڈنگ ثابت ہوگئی ہے۔
پی ٹی آئی کو ابراج گروپ سمیت غیر ملکی کمپنیوں سے فنڈنگ موصول ہوئی۔ پی ٹی آئی نے اپنے 16 اکاؤنٹس الیکشن کمیشن سے چھپائے۔ پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان نے الیکشن کمیشن میں مس ڈیکلیریشن جمع کرایا۔ پی ٹی آئی چیئرمین کا سرٹیفکیٹ غلط تھا۔ عمران خان کے بیان حلفی میں غلط بیانی کی گئی ہے۔

پی ٹی آئی 9 حلقوں کیلیے انتخابی شیڈول کی معطلی کیلیے عدالت پہنچ گئی

123-40.jpg

اسلام آباد(ویب ڈیسک) تحریک انصاف نے 9 حلقوں کے لیے الیکشن کمیشن کا جاری کردہ انتخابی شیڈول اسلام آباد ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا۔
پی ٹی آئی کی جانب سے وکیل فیصل چوہدری نے اسلام آباد ہائی کورٹ میں متفرق درخواست دائر کی ہے جس میں اسلام آباد ہائی کورٹ سے انتخابی شیڈول کو معطل کرنے کی استدعا کی گئی ہے۔
درخواست میں کہا گیا ہے کہ پی ٹی آئی ارکان کے استعفوں کی مرحلہ وار منظوری کے خلاف درخواست زیر التوا ہے، عدالت چار اگست کو درخواست پر سماعت کرکے نوٹس جاری کر چکی ، الیکشن کمیشن کو نوٹس کا معلوم ہے اس کے باوجود شیڈول جاری کردیا گیا۔
درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ الیکشن کمیشن کا پانچ اگست کو جاری کردہ شیڈول معطل کیا جائے، پی ٹی آئی کے مرکزی کیس کے فیصلے تک الیکشن کمیشن کا انتخابی شیڈول معطل رکھا جائے۔
اسلام آباد ہائی کورٹ نے پی ٹی آئی کی درخواست سماعت کے لیے مقرر کردی، قائم مقام چیف جسٹس عامر فاروق درخواست پر بدھ کو سماعت کریں گے۔

عمران خان نے فارن فنڈنگ کے عوض کشمیر کا سودا کیا، وزیراطلاعات

123-39.jpg

اسلام آباد(ویب ڈیسک) وزیراطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ عمران خان نے پی ٹی آئی ملازمین کے ذاتی اکاؤنٹس میں خیرات کا پیسہ منگوا کر سیاسی مقاصد کے لیے استعمال کیا اور کشمیر کا سودا کر کے غیرملکی فنڈنگ لینے کا عہد پورا کیا۔
اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیراطلاعات کا کہنا تھا کہ عمران خان نے ممنوعہ فنڈنگ منگوائی اور یہ اکائونٹ اس لئے ڈیکلیئر نہیں کئے کیونکہ یہ چوری کا پیسہ تھا، یہ خیرات کی رقم پی ٹی آئی کے ملازمین کے ذاتی اکاؤنٹس میں منگوائی گئی جسے سیاسی مقاصد کیلیے استعمال کیا گیا۔
انہوں نے کہا کہ عمران خان فارن فنڈنگ کیس کے فیصلے میں مشکلات کھڑی کرتے رہے اور پھر دعویٰ کیا کہ یہ تکنیکی معاملہ ہے اور مجھے معلوم نہیں تھا کہ میری پارٹی کے ملازمین کے اکاؤنٹس میں پیسہ آتا رہا۔
وزیراطلاعات نے کہا کہ عمران خان کو اوورسیز پاکستانیز نے خیرات کے پیسے دیئے، سمندر پار پاکستانیوں نے عمران خان کو فلڈ فنڈ میں بھی پیسہ دیا، جسے عمران خان نے سیاست کے لئے استعمال کیا۔
مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ عمران خان کو معلوم تھا کہ یہ پیسہ کہاں سے آ رہا ہے، وہ دو (پاکستانی اور پی ٹی آئی) جھنڈے رکھ کر دعویٰ کرتے ہیں کہ الیکشن کمیشن جھوٹ بول رہا ہے،عمران خان کہتے ہیں کہ یہ ان کی بہت بڑی غلطی تھی کہ انہوں نے سکندر سلطان راجہ کو چیف الیکشن کمشنر لگایا۔
وزیراطلاعات نے سوال کیا کہ کیا عمران خان نے سکندر سلطان راجہ کو الیکشن کمشنر اس لیے تعینات کیا تھا کہ وہ فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ نہ دے۔ مریم اورنگزیب نے کہا کہ عمران خان فارن ایجنٹ ہیں، انہوں نے فارن فنڈنگ لی ہے، الیکشن کیشن میں جھوٹا بیان حلفی جمع کروایا ہے، عمران خان کی تحریک انصاف فارن ایڈڈ پارٹی ڈیکلیئر ہوئی ہے۔
انہوں نے کہا کہ عمران خان کی بات سننے والے لوگوں کو عمران خان سے یہ سوال پوچھنا ہوگا کہ وہ اس فارن فنڈنگ کے ساتھ کیا کرتے رہے ہیں؟، عمران خان نے 2008ء سے 2013ئ، 2013ء سے 2018ء اور 2018ء سے 2022ء تک فارن فنڈنگ کے ذریعے ملک میں سازشی منصوبہ لانچ کیا، جس کا آغاز 2008ء سے ہوا، پھر اسی کے ذریعے 2013 میں پارلیمانی نظام اور جمہوریت کو نقصان پہنچانے کی کوشش کی گئی۔
وزیراطلاعات کا کہنا تھا کہ عمران خان نے ملک میں سیاسی عدم استحکام پیدا کر کے سی پیک کو روکنے کی کوشش کی، یہ وہ اہداف تھے جن کی عمران خان نے فارن فنڈرز کے ساتھ کمٹمنٹ کر رکھی تھی، عمران خان نے ملک کے اندر سول نافرمانی کی کال دی، آج بھی ان کا یہی رویہ ہے۔
مریم اورنگزیب نے کہا کہ نواز شریف کو جب وزارت عظمیٰ سے ہٹایا گیا تو اس وقت ملک کی ترقی کی شرح 6 فیصد تھی، ملک میں سی پیک کے تحت منصوبے چل رہے تھے، ملک سے دہشت گردی کا خاتمہ ہو رہا تھا، لوگوں کو روزگار مل رہا تھا، ملک کو سفارتی سطح پر کامیابیاں مل رہی تھیں، نواز شریف کو اس وقت ملک سے نکال کر بلنڈر کیا گیا۔
وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ عمران خان نے فارن فنڈنگ لے کر سی پیک منصوبہ روکا، کشمیر کا سودا اور ملکی ترقی کی شرح کو منفی کرنے کا عہد پورا کیا، عمران خان نے نوجوانوں کو بے روزگار کیا، ملک میں نفرت، سیاسی عدم استحکام پیدا کیا، میڈیا کے لوگوں کو قید کیا۔

عالمی برادری کشمیریوں کو حق خودارادیت دلائے،سربراہ پاک فضائیہ

g6-1.jpg

اسلام آباد (بادشمال نیوز)سربراہ پاک فضائیہ ایئر چیف مارشل ظہیر احمد بابر سدھو نے مقبوضہ جموں و کشمیر کی خصوصی حیثیت اور آبادی کے تناسب میں غیرقانونی تبدیلی، جاری بھارتی فوجی محاصرے اور انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کے تناظر میں مقبوضہ جموں و کشمیر کے بہادر اور جفاکش عوام کی بھارتی غاصبانہ تسلط کے خلاف پر امن جدوجہد میں انکے ساتھ کھڑے ہونے کے عزم کا اعادہ کیا۔ اپنے پیغام میں انہوں نے کہا کہ عدل، انصاف اور انسانی وقار کی سربلندی کے لئے ضروری ہے کہ عالمی برادری ایسے عملی اقدامات اٹھائے جن سے بھارت کو کشمیریوں کے خلاف اپنے موجودہ غیرقانونی اقدامات واپس لینے کے لئے مجبور کیا جا سکے۔ بھارت کو یہ جان لینا چاہیے کہ ہر کشمیری کی شہادت اور ہر گھر کی تباہی سے کشمیریوں کے بھارتی قبضے سے آزادی کے عزم کو مزید تقویت ملے گی۔ ائیرچیف نے کہا کہ ہم ہمیشہ اپنے کشمیری بھائیوں کی حقیقی جدوجہد آزادی میں انکے ساتھ کھڑے رہیں گے۔

جب ہم نے بیرونی کمپنیوں سے پیسے لیے اس وقت قانوناً جائز تھا، عمران خان

123-25.jpg

اسلام آباد(ویب ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ جب ہم نے کمپنیوں سے پیسے لیے اس وقت قانوناً جائز تھے، 2012 میں بیرونی کمپنی سے پیسے آسکتے تھے اور 2017 بیرونی کمپنی سے پیسے لینے پر پابندی لگی۔
الیکشن کمیشن کے خلاف احتجاج کے موقع پر عوام سے خطاب کے دوران انہوں نے کہا کہ مڈل کلاس اور تنخواہ دار کے لیے سیاست مہنگی ہوگئی، مسلم لیگ (ن) اور پیپلز پارٹی پیسے کے بل پر سیاست میں ہیں۔
عمران خان نے کہا کہ بیرون ملک پاکستانیوں میں شعور ہے ان کا معلوم ہے جمہوری نظام کیا ہوتا ہے، ان دونوں پارٹیوں نے فنڈریزنگ کیوں نہیں کی؟ کیونکہ مسلم لیگ (ن) اور پیپلز پارٹی کو کوئی پیسہ دے گا ہی نہیں اور افسوس کہ الیکشن کمیشن نے دونوں پارٹیوں کی فنڈنگ کے کیسز نہیں سننے۔
انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس 40 ہزار ڈونرز ہیں، ووٹن کارٹن کلب کا مالک عارف نقوی تھا، 2012 میں ہم پیسے لیے اور عارف نقوی پر فراڈ کا چارج 2018 میں لگتا ہے۔
چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ عارف نقوی نے میچ فیسٹول کیا اور پھر کھانا کیا تھا جس میں پیسے اکٹھے کیے۔ علاوہ ازیں انہوں نے حلف نامہ اور سرٹیفکیٹ سے متعلق کہا کہ شہباز شریف نے عدالت میں کہا کہ نواز شریف واپس آجائیگا اسے حلف کہتے ہیں،
عمران خان نے کہا کہ الیکشن کمیشن کہہ رہا ہے کہ یہ فارن فنڈنگ کیس ہے، یہ بتائیں جو پاکستانی 31 ارب ڈالر بھیجتے ہیں وہ کیا ہے، الیکشن کمیشن یہ کہہ رہا ہے بیرون ملک پاکستانی پیسا دیں گے تو یہ فارن فنڈنگ ہے۔
انہوں نے کہا کہ اس ملک ابھی بھی وہ قوتیں بیٹھیں ہیں جو عوام کنٹرول کرنا چاہتی ہیں، حکومت نے الیکشن کمیشن کے ساتھ مل کو الیکٹرانک مشین کوسبوتاژ کیا۔

گورنر پنجاب نے صوبے کی 21 رکنی کابینہ سے حلف لینے کا فیصلہ کرلیا

123-24.jpg

لاہور(ویب ڈیسک)گورنر پنجاب بلیع الرحمن نے پنجاب کی 21 رکنی کابینہ سے حلف لینے کا فیصلہ کیا ہے۔
ذرائع کے مطابق گورنر پنجاب کی جانب سے مؤقف اختیار کیا گیا کہ وہ صدر مملکت عارف علوی اور عمرچیمہ کی طرح رویہ اختیار نہیں کریں گے۔
علاوہ ازیں گورنر پنجاب کی جانب سے مسلم لیگ (ق) اور پی ٹی آئی کی مشترکہ کابینہ سے شام 5 بجے حلف لیا جائے گا۔ ذرائع کے مطابق گورنر ہاؤس میں حلف برداری کی تقریب کیلئے حکومت کی جانب سے سمری بھیجوائی تھی۔

چیف الیکشن کمشنر سے مستعفی ہونے کا مطالبہ؛ پی ٹی آئی نے یادداشت ای سی پی میں جمع کرادی

123-23.jpg

اسلام آباد(ویب ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے اراکین قومی اسمبلی نے ایوان زیریں سے الیکشن کمشن تک الیکشن کمشنر کے خلاف احتجاجی مارچ کیا اور دفتر کے اندر داخل ہونے کی اجازت نہ ملنے پر اپنی یادداشت باہر ہی الیکشن کمیشن کے ڈیوٹی افسر کو جمع کرادی۔
تفصیلات کے مطابق احتجاج مارچ میں پی ٹی آئی کے سینئر رہنما اسد عمر، عمر ایوب، راجہ خرم نواز سمیت وکلا نے شرکت کی۔ ارکانِ پارلیمنٹ خاردار تاریں عبور کر کے الیکشن کمیشن کے دفتر کے سامنے پہنچے جہاں پولیس کے ساتھ دھکم پیل بھی ہوئی۔
پی ٹی آئی رہنماؤں نے میڈیا سے گفتگو میں چیف الیکشن کمشنر سے مستعفی ہونے کا مطالبہ دہرایا۔ اس دوران پی ٹی آئی احتجاج کے باعث چیف الیکشن کمشنر سلطان دفتر سے روانہ ہوگئے تھے۔

پی ڈی ایم نے عمران خان کی نااہلی کیلیے الیکشن کمیشن میں ریفرنس دائر کردیا

123-22.jpg

ڑاسلام آباد: پی ڈی ایم نے عمران خان کو نااہل قرار دلانے کے لیے الیکشن کمیشن میں ریفرنس دائر کردیا۔
پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) نے تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کو نااہل قرار دینے کے لیے الیکشن کمیشن آف پاکستان میں ریفرنس دائر کردیا۔
پی ڈی ایم نے آئین کے آرٹیکل 63 کے تحت ریفرنس دائر کیا جسے محسن شاہنواز رانجھا کی جانب سے الیکشن کمیشن میں جمع کرایا گیا ہے۔
پی ڈی ایم نے اپنے ریفرنس میں موقف اختیار کیا ہے کہ سابق وزیراعظم عمران خان نے توشہ خانہ سے ملنے والے تحائف اثاثوں میں ظاہر نہیں کیے، عمران خان کو آئین کے آرٹیکل 62 ون ایف کے تحت نااہل قرار دیا جائے۔
دریں اثنا پی ڈی ایم کی طرح اسپیکر قومی اسمبلی راجہ پرویز اشرف بھی عمران خان کے خلاف توشہ خانہ ریفرنس جلد الیکشن کمیشن کو بھیجیں گے۔
اسپیکر نے گزشتہ روز عمران خان کے خلاف توشہ خانہ ریفرنس الیکشن کمیشن کو بھجنے کا فیصلہ کیا تھا اور اس حوالے سے پی ڈی ایم کو آگاہ کردیا تھا۔

نواز شریف نے پارٹی کے فیصلوں کا اختیار اپنے پاس رکھ لیا

123-21.jpg

لاہور(ویب ڈیسک)مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف نے پارٹی کے فیصلوں کا اختیار اپنے پاس رکھ لیا۔
مسلم لیگ (ن) کے ذرائع کے مطابق مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف نے مریم نواز کو عمران خاں کے خلاف اہم ذمہ داری سونپ دی، ذمہ داری ملنے کے بعد مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز متحرک ہوگئیں ہیں۔
پارٹی ذرائع کے مطابق مریم نواز نے گزشتہ روز وزیراعظم ہاؤس میں منعقدہ پی ڈی ایم سربراہی اجلاس میں نواز شریف کی نمائندگی کی، مریم نواز نے مسلم لیگ (ن) کے قائدین کو ممنوعہ فنڈنگ کے معاملہ کو زیادہ سے زیادہ نمایاں کرنے کی ہدایت کر دی۔
پارٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ مریم نواز کی ہدایت پر ہی گزشتہ روز سے لیگی رہنماؤں کی مسلسل پریس کانفرنسوں کا سلسلہ جاری ہے، لیگی وزراء اور پارٹی رہنماؤں کو اہم ذمہ داریاں سونپ دی گئی ہیں اور مہم کی نگرانی خود مریم نواز کریں گی۔
پارٹی ذرائع کے مطابق تمام قائدین روزانہ کی بنیاد پر پریس کانفرنس میں ممنوعہ فنڈنگ کیس کے فیصلے کو اجاگر کریں گے، عمران دورے حکومت کی کرپشن اور مہنگائی کو بھی اجاگر کیا جائے گا، پریس کانفرنسوں میں عمران خان کو ہدف تنقید بنایا جائے گا۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ پارٹی کو فعال کرنے کے لیے ملک بھر میں ورکرز کنونشن بھی منعقد کیے جائیں گے جن سے مریم نواز خطاب کریں گی، ورکرز کنونشنز کے لیے پارٹی کو شیڈول تیار کرنے کی ہدایات جاری کردی گئی ساتھ ہی سوشل میڈیا پر بھی عمران خان کے خلاف مہم کو تیز کیا جائے گا۔

Top