ڈالر کی قدر میں ڈھائی روپے کا اضافہ

2344544-dollar-1656936189-379-640x480-1.jpg

کراچی: منگل کو زرمبادلہ کی دونوں مارکیٹوں میں ڈالر نے دوبارہ سر اٹھانا شروع کردیا اور ہفتہ وار کاروبار کے دوسرے دن کے ابتدائی لمحات سے ہی انٹربینک مارکیٹ میں ڈالر کی اڑان تیز رفتار رہی۔

ذرائع کے مطابق منگل کو ڈالر کے انٹربینک ریٹ 206 روپے سے تجاوز کرگئے جبکہ اوپن مارکیٹ ریٹ بھی 207 روپے کی سطح پر آگئے۔وزیر خزانہ کی جانب سے گذشتہ روز ہی آئی ایم ایف پروگرام میں شمولیت موخر نہ ہونے کی وضاحت کی گئی تھی لیکن اس وضاحت کے فوری بعد ہی پنجاب کے وزیراعلی کی جانب سے الیکشن کے موقع پر ایک سو یونٹ ماہانہ بجلی استعمال کرنے والے کم آمدنی کے حامل طبقے کے لیے مفت بجلی کی فراہمی کا اعلان کیا گیا ہے۔

یہ اعلان ایک بار پھر آئی ایم ایف قرض پروگرام میں ڈیڈ لاک پیدا کرنے کا باعث بن سکتا ہے اور آئی ایم ایف قرض پروگرام میں شمولیت موخر ہوسکتی ہے یہی وجہ ہے کہ منگل کو ڈالر کی اڑان تیز رفتار رہی جس سے ایک موقع پر ڈالر کے انٹربینک ریٹ 207 روپے سے بھی تجاوز کرگئے تھا تاہم کاروبار کے اختتام پر انٹربینک مارکیٹ میں ڈالر کی قدر 2.38 روپے کے نمایاں اضافے کے ساتھ 206.94 روپے کی سطح پر بند ہوئی۔
اسی طرح اوپن کرنسی مارکیٹ میں ڈالر کی قدر 2.50 روپے کے اضافے سے 207 روپے کی سطح پر بند ہوئی۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ آئی ایم ایف حکام پہلے ہی سابقہ حکومت کی جانب سے وعدوں کے برخلاف پیٹرولیم مصنوعات پر سبسڈی سمیت دیگر اقدامات سے خائف تھے اور جبکہ پاکستان کی جانب سے تقریبا تمام تر سخت شرائط پوری کرلی گئی ہیں اور قرض پروگرام کی بحالی کی امید یوچلی تھی کہ وزیراعلی پنجاب نے 100 یونٹ بجلی مفت فراہم کرنے کا اعلان کردیا ہے۔

اس اعلان سے خدشہ پیدا ہوگیا ہے کہ آئی ایم ایف حقیقی صورتحال واضح ہونے پر ہی پاکستان کے لیے قرض پروگرام بحال کرے گا اور قرض پروگرام میں تاخیر کی صورت میں روپیہ پر دباؤ بڑھتا جائے گا۔

سونے کی عالمی اور مقامی قیمت میں کمی

2331739-gold-1654516896-212-640x480-1.jpg

کراچی: بین الاقوامی بلین مارکیٹ میں فی اونس سونے کی قیمت 4 ڈالر کی کمی سے 1807 ڈالر کی سطح پر پہنچنے کے باعث مقامی صرافہ مارکیٹوں میں بھی پیر کو فی تولہ اور دس گرام سونے کی قیمتوں میں بالترتیب 300 روپے اور 257 روپے کی کمی واقع ہوئی۔

نتیجے میں ملکی سطح پر فی تولہ سونے کی قیمت گھٹ کر ایک لاکھ 41 ہزار 400 روپے اور فی 10 گرام قیمت گھٹ کر ایک لاکھ 21 ہزار 228 روپے ہوگئی۔

دریں اثنا فی تولہ چاندی کی قیمت بغیر کسی تبدیلی کے 1520 روپے کی سطح پر مستحکم رہی۔

 

کروٹ ہائیڈرو پاور آج سے بجلی بنانا شروع کردے گا

2342214-electricity-1656473533-998-640x480-1.jpg

اسلام آباد: کروٹ ہائیڈرو پاور آج سے بجلی بنانا شروع کردے گا۔
چین پاکستان اقتصادی راہداری (سی پیک)کے 720 میگاواٹ کے کروٹ ہائیڈرو پاور پراجیکٹ نے 168 گھنٹے طویل قابل اعتماد ٹیسٹ رن کامیابی سے پاس کر لیا اور یہ آج سے کمرشل آپریشن شروع کر دے گا۔ اسے 1.72 ارب ڈالر سے مکمل کیا گیاہے۔
یہ منصوبہ صاف اور سستی بجلی فراہم کرکے توانائی کی حفاظت میں اہم کردار ادا کرے گا۔کروٹ پاور کے عہدیدار نے بتایا وزیراعظم شہباز شریف اسی دن تاریخی منصوبے کا افتتاح کریں گے۔کروٹ پاور خصوصی مقصد والی گاڑی ہے جسے چائنا تھری گورجز (سی ٹی جی)کی ذیلی کمپنی ساؤتھ ایشیا انویسٹمنٹ لمیٹڈ کے ذریعے مکمل کرنے کیلیے شامل کیا گیا ہے۔
کروٹ پاور کیلیے 10 سینٹ فی یونٹ ٹیرف کا تعین کیا گیاہے اورآج سے قیمت وصول کرنا شروع کردے گا۔

سونے کی فی تولہ قیمت میں 350 روپے اضافہ

2331739-gold-1654516896-212-640x480-1.jpg

کراچی: بین الاقوامی بلین مارکیٹ میں فی اونس سونے کی قیمت 3ڈالر کے اضافے سے 1826 ڈالر کی سطح پر پہنچنے کے باعث مقامی صرافہ مارکیٹوں میں بدھ کو فی تولہ اور دس گرام سونے کی قیمتوں میں بالترتیب 350روپے اور 300روپے کا اضافہ ہوگیا۔

عالمی مارکیٹ میں قیمتوں میں اضافےکےنتیجےمیں کراچی، حیدرآباد، سکھر، ملتان، لاہور، فیصل آباد، راولپنڈی، اسلام آباد، پشاور اور کوئٹہ کی صرافہ مارکیٹوں میں فی تولہ سونے کی قیمت بڑھ کر 141850 روپے اور فی دس گرام سونے کی قیمت بڑھ کر 121613 روپے ہوگئی۔

اس کے برعکس فی تولہ چاندی کی قیمت بغیر کسی تبدیلی کے 1560روپے اور دس گرام چاندی کی قیمت بھی بغیر کسی تبدیلی کے 1337.44 روپے پر مستحکم رہی۔

یکم جولائی کوتمام بینک عوامی لین دین کیلئے بند رہیں گے،اسٹیٹ بینک.

2342478-statebankofpakistan-1656512305-496-640x480-1.jpg

کراچی: اسٹیٹ بینک کی ہدایت پر یکم جولائی 2022 بروز جمعہ کو ملک بھر کے بینکوں میں عوامی لین دین کا سلسلہ بند رہے گا۔

مرکزی بینک سے جاری بیان کے مطابق بینک اکاؤنٹس کی کلوزنگ کیلئے جمعہ کے روز تمام بینکوں میں پبلک ڈیلنگ نہیں کی جائے گی۔

تمام بینک، ترقیاتی مالی ادارے سمیت مائیکروفنانس بینک یکم جولائی کو پبلک ڈیلنگ کے لیے بند رہیں گے۔ تاہم بینکوں،ترقیاتی مالی اداروں،مائیکروفنانس بینکوں کے ملازمین معمول کے مطابق دفتر حاضر ہوں گے۔

ڈالر کی قدر میں کمی کا سلسلہ جاری

2341570-doller-1656330601-435-640x480-1.jpg

کراچی: آئی ایم ایف کی جانب سے اقتصادی اقدامات سے متعلق مسودہ موصول ہونے کے بعد ایک ارب 90کروڑ ڈالر کی دو اقساط جاری ہونے کے امکانات اور برآمدی شعبوں کی جانب سے اپنی زرمبادلہ میں موصول ہونے والی برآمدی آمدنی بھنائے جانے سے بدھ کو بھی ڈالر کی قدر تنزلی سےدوچار رہی جس سے ڈالر کے انٹربینک ریٹ 206روپے سے بھی نیچے آگئے جبکہ اوپن ریٹ بھی 206روپے سے نیچے آگئے۔
کاروبار کے تمام دورانیے میں ڈالر کی قدر تنزلی سے دوچار رہی جس کے نتیجے میں کاروبار کے اختتام پر انٹربینک مارکیٹ میں ڈالر 1.28 روپے کی کمی کے بعد 205.12 روپے کی سطح پر بند ہوا جبکہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں ڈالر کی قدر 1.50 روپے کی کمی سے 205روپےکی سطح پر بند ہوئی۔
ماہرین کا کہنا ہے کہ جاپان سے فنڈز ملنے اور فرانس کے 107ملین ڈالر کے علاوہ جی ٹوینٹی ممالک کی جانب سے 3ارب 50کروڑ ڈالر کے واجب الادا قرضوں کی وصولیاں موخر کرنے کی سہولت اور متحدہ عرب امارات کی جانب سے پاکستان میں سرمایہ کاری دلچسپی جیسی خبروں کے باعث ڈالر کی نسبت روپیہ تگڑا رہا ہے۔

 

یوٹیلیٹی اسٹورز پرگھی اورکوکنگ آئل کی قیمتوں میں کئی گنا اضافہ

download-4.jpg

ملک بھر میں یوٹیلیٹی اسٹورز پرگھی اورکوکنگ آئل مہنگا کردیا گیا۔

یوٹیلیٹی اسٹورزپرمختلف برانڈزکےگھی اورکوکنگ آئل کی قیمتوں میں کئی گنا اضافہ کیا گیا ہے، یوٹیلیٹی اسٹورز کارپوریشن نے قیمتوں میں اضافےکا نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا ہے۔

نوٹیفکیشن کے مطابق ایک کلوگھی کی قیمت میں 208 روپےتک اضافہ کیا گیا ہے جس کے بعد یوٹیلیٹی اسٹورزپرمختلف برانڈز کےگھی کی فی کلو قیمت 555 روپے تک پہنچ گئی ہے۔

 مختلف برانڈز کےکوکنگ آئل کی فی لیٹر قیمت میں 213 روپے تک اضافہ کیا گیا ہے جس کے بعد یوٹیلیٹی اسٹورز پرکوکنگ آئل کی فی لیٹر قیمت 605 روپے تک پہنچ گئی ہے۔

یوٹیلیٹی اسٹورز کارپوریشن کی جانب سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق کوکنگ آئل اور گھی کی نئی قیمتوں کا اطلاق یکم جون سے ہوگا۔

حکومت نے کھاد کی قیمت میں کمی کا نوٹیفکیشن واپس لے لیا

download-2.jpg

وفاقی حکومت نے کھاد کی قیمت میں کمی کا نوٹیفکیشن واپس لے لیا۔

اعلامیے کے مطابق کھاد کی قیمت مقررکرنے کا نوٹیفکیشن واپس لینے کا اطلاق فوری ہوگا اور کھاد کی قیمت مقرر کرنے کا نوٹیفکیشن واپس لینے کیلئے ایس آر او جاری کردیا۔

اعلامیے کا کہنا ہے کہ کھاد کے 50 کلو تھیلے کی ریٹیل قیمت 1768روپے مقرر کی گئی تھی جس کا اطلاق فوری طور پر اور 7 جولائی 2022 تک کیا گیا تھا۔

حکومت نے گزشتہ ہفتے کھاد کی سرکاری سطح پر قیمت مقرر کی تھی اور  قیمت میں 389 روپے تک کمی کی گئی تھی۔

کھاد کا 50 کلو کا تھیلا اب پرانی قیمت پر ہی مل سکے گا۔

سونے کی فی تولہ قیمت میں کمی کا سلسلہ جاری

download-1.jpg
ملک میں سونے کی فی تولہ قیمت میں کمی کا سلسلہ جاری ہے۔
سندھ صرافہ بازار جیولرز ایسوسی ایشن کے مطابق سونے کی فی تولہ قیمت 800 روپے کم ہوئی  ہے اور فی تولہ قیمت ایک لاکھ 37 ہزار 300 روپے ہے۔
10 گرام سونے کی قدر 685 روپے کم ہوکر ایک لاکھ 17 ہزار 713 روپے ہے جبکہ عالمی صرافہ میں سونے کی قدر 6 ڈالرز کم ہوکر 1849 روپے فی اونس ہے۔

’لگژری‘ اشیا پر پابندی سے درآمدات پر کوئی خاص فرق نہیں پڑے گا

2328629-superstoresliderimgx-1653885382-292-640x480-1.jpg

اسلام آباد: حکومت کی جانب سے ’لگژری‘ اشیا پر پابندی سے درآمدات پر کوئی خاص فرق نہیں پڑے گا۔

حکومت نے معاشی زوال پذیری کا راستہ روکنے کیلیے قدم اٹھاتے ہوئے تقریباً تین درجن ’لگژری‘ اشیا کی درآمد پر پابندی عائد کر دی ہے جن میں گاڑیاں، موبائل فون، گھریلو استعمال کی اشیا اور تیار خوراک شامل ہے۔

’لگژری‘ اشیا کی درآمد پر پابندی بظاہر ایک مقبول قدم ہوتا ہے مگر اس سے نہ تو درآمدی بل کے حجم میں کوئی خاص کمی آتی ہے، نہ کرنسی مستحکم ہوتی ہے اور نہ ہی زرمبادلہ کے ذخائر میں کوئی اضافہ ہوتا ہے۔

مجموعی طور پر اس کے منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں۔ پچھلے 10 ماہ کے دوران ان اشیا کا مجموعی درآمدی بل 90 کروڑ ڈالر ہے، جو مجموعی درآمدات کے محض 1 فیصد کے مساوی ہے۔

حکومت کے ’ لگژری‘ اشیا پر پابندی کے اقدام سے درحقیقت ریونیو میں نقصان ہو گا، کیوں کہ خام مال کی درآمد پر پابندی نہیں ہے، چناں چہ خام مال منگواکر یہ اشیا مقامی سطح پر تیار کی جا سکتی ہیں۔

دوسری جانب تیار مصنوعات کی درآمد پر حکومت کو ٹیکس کی مد میں آمدنی ہوتی تھی۔ دوسری جانب ان اشیا کی درآمد پر پابندی سے مقامی مارکیٹ پر ملکی کمپنیوں کی اجارہ داری قائم ہو جائے گی، وہ قیمتیں بڑھادیں گے اور صارفین جو پہلے ہی مالی دبائو کا شکار ہیں، ان پر مزید بوجھ پڑجائے گا۔

 

Top